گند م کی قیمت اور بلا تعطل دستیا بی اولین تر جیح

وزیر اعظم عمر ان خان نے گذشتہ رو ز اجلا س سے خطا ب کر تے ہوئے ایک با ر پھر اس عز م کا اظہا ر کیا ہے کہ گند م کی کم قیمت اور بلا تعطل دستیا بی حکومت کی اولین تر جیح© ہے انہو ں نے اس سلسلے میں متعلقہ حکام کو ہد ایت دیتے ہوئے کہا کہ عا م آدمی کو سستے آٹے کی فر اہمی یقینی بنا ئی جا ئے اور اس کے سا تھ سا تھ جے آئی ٹی کی ر پو رٹ کے تنا ظر میں چینی کی ذخیر ہ اند و ز ی کیخلا ف مز ید موثر کا روائی کی جا ئے اجلا س میں صو بائی چیف سیکر ٹر یز کو ذخیر ہ اند و زو ں کیخلا ف بلا تفر یق کا رو ائی کر نے کی بھی ہد ایت کی گئی۔
حکومت کا گند م کی کم قیمت اور بلا تعطل دستیا بی کو اولین تر جیح دینا بلا شبہ قا بل تعر یف اقد ام ہے اور اس طر ح عا م آدمی کو سستے آٹے کی فر اہمی کو یقینی بنا نا بھی اچھی با ت ہے لیکن افسو س کی با ت یہ ہے کہ حکومت نے اس سلسلے میں اب تک جتنے بھی وعد ے اور دعو ے کئے ہیں ان پر من وعن عمل در آمد نہیں ہو سکا اس کی مثا ل ما رکیٹ میں آٹے کی قیمتو ں میں بر قر ار اضا فہ جو کا فی عر صے سے چلا آرہا ہے اس بیا ن کی نفی کر تا ہے کچھ عر صے پہلے جو ملک میں گند م کی قلت پید ا ہو ئی اور جس کے نتیجے میں آٹے کی قیمتو ں میں ہو شر با ءاضا فہ ہو ا جو کچھ کم ہونے کے بعد اب بھی بر قر ار ہے ایسے میں وزیر اعظم عمر ان خان نے عو ام سے ایک اور وعد ہ اور دعو یٰ کر ڈالا جو کہ ایک بہت بڑ ا لمحہ فکر یہ ہے۔
جہا ں تک جے آئی جے کی چینی کے با رے میں ر پو رٹ کا تعلق ہے تو اس ر پورٹ کو پبلک کرنے کا حکومتی اقد ام تو اچھا ہے لیکن اب تک اس پر عمل درآمد نہ ہونا قا بل مذمت ہے کیو نکہ ما رکیٹ میں چینی کی قیمتو ں میںکوئی کمی نہیں ہو ئی اب بھی عوام مہنگی دامو ں چینی خر ید نے پر مجبو ر ہے لیکن اس کے با وجو د حکومت اب بھی صر ف دعو ے اور وعد ے کر رہی ہے اس سلسلے میں ٹھو س اقد اما ت کرنے کی اشد ضرورت ہے صر ف دعو ے اور وعد ے کرکے اخبا ر کی شہ سر خیا ں بنا نے سے کا م نہیں چلے گا حکومت کو اس سلسلے میں مثبت اقد اما ت کرنے چا ہئیں چینی سیکنڈ ل میں ملو ث افر اد کی نشا ند ہی تو رپو رٹ میں ہو چکی ہے لیکن ان کے خلا ف کا رو ائی کے سلسلے میں سست روی سے کا م لیا جا رہا ہے جو کہ بلا شبہ اچھا اقد ام نہیں ہے اس سے یہ نتیجہ اخذ کیا جا سکتا ہے کہ شا ہد حکومت چینی سیکنڈ ل میں ملو ث افر اد کو بچا نا چا ہتی ہے اگر حکومت ایسا کر نے لگی ہے تو اس کے لیے بہت ہی غلط ہو گا اس لیے حکومت کو اس سے گر یز کر نا چا ہیئے۔
وزیر اعظم عمر ان خان نے ذخیر ہ اند و زو ں کیخلا ف مو ثر کا رو ائی کی جو ہد ایا ت دی ہیں اس پر بھی عملی طو ر پر اقد اما ت کرنے کی اشد ضرورت ہے کیو نکہ ہما رے ہا ں یہ بد قسمتی رہی ہے کہ اب تک ذخیر ہ اند و زو ں کو کوئی سز ا نہیں دی گئی کسی بھی دو ر میں ان کے خلا ف کوئی کا روائی نہیں ہو سکی جس کی وجہ سے شا ہد پیسے کی چمک اور اثر ور سو چ ہو سکتا ہے جو کہ ایک لمحہ فکر یہ ہے اگر ایسا ہے تو پھر یہ نہیں ہونا چا ہیئے اس عمل میں شفا فیت کی ضرورت ہے۔

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*