تجارت اور کاروبار کے تسلسل کو برقرا رکھنا ضروری ہے: آئی ایم ایف

کراچی(کامرس ڈیسک)بین الاقوامی مالیاتی فنڈ(آئی ایم ایف)نے کہا ہے کہ کورونا وائرس کی وبا کے اثرات کو کم کرنے کے ضمن میں تجارت، کاروباری سرگرمیوں کے تسلسل کو برقرا رکھنا اور محصولات کے ذرائع کو محفوظ کرنا ضروری ہے۔یہ بات بین الاقوامی مالیاتی فنڈ کی ڈپٹی منیجنگ ڈائریکٹر انتونیت سائی نے اپنے ایک آرٹیکل میں کہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ غیر معمولی حالات میں غیر معمولی اقدامات اور فیصلے کئے جاتے ہیں۔ وائرس کے اثرات کو کم کرنے اور پائیدار اقتصادی بڑھوتری کیلئے پالیسی سازوں کو ان اقتصادی اداروں کو مضبوط بنانا ہوگا جو پالیسی سازی کا کام کر رہے ہیں۔انتونیت سائی نے کہا کہ حکومتوں کو اس وقت فیصلہ سازی میں مشکلات کا سامنا ہے۔ کئی ممالک ایسے ہیں جن کی مضبوط اقتصادی بنیادیں نہیں اور نہ ہی ان کے پاس تکنیکی مہارتیں ہیں۔ ان ممالک کو بڑھتے ہوئے مصارف کا دبا، حکومتی محصولات میں کمی اور قرضوں میں اضافہ جیسے مسائل کا بھی سامنا ہے۔آئی ایم ایف کی ڈپٹی منیجنگ ڈائریکٹر نے کہا کہ موجودہ حالات میں دنیا کے غریب ترین ممالک کیلئے بیرونی قرضوں کی ادائیگی ایک مشکل مرحلہ ہے۔ اس ضمن میں آئی ایم ایف نے 27 ممالک کیلئے اپنے قرضوں میں سہولت فراہم کی ہے جبکہ عالمی بینک اور گروپ 20 کے ممالک کے ساتھ مل کر دیگر نوعیت کے اقدامات بھی اٹھائے جا رہے ہیں۔

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*