عوام کو علا ج و معا لجے میں سہو لتوں کا فقد ان

صوبائی دا ر الحکومت کوئٹہ میں قا ئم سرکا ری ہسپتا لو ں میں عوا م علا ج کی سہو لتو ں سے محر وم ہیں ان ہسپتا لو ں میں مر یضو ں کو ادو یا ت با لکل فر اہم نہیں کی جا تیں کوئی بھی مریض چا ہے وہ شعبہ حا دثا ت میں لا یا جائے یا آپر یشن تھیٹر اور وا رڈ میں دا خل کیا جائے ان کو ادو یا ت فر اہم نہیں کی جا تیں جس کے باعث وہ تما م ادو یا ت با زا ر سے خر ید کر لا تے ہیں شعبہ حا دثا ت جو ظا ہر اً ایک ایمر جنسی ادا رہ ہے میں بھی مر یض کو لانے والے کو پر چیو ں پر ادو یات لکھ کر دی جا تی ہیں کہ وہ با زا ر سے خر ید کر لا ئے چا ہے اسی دوران اس کا مر یض تکلیف میں ہی کیو ں نہ ہو یہی حا لا ت آپر یشن تھیٹر ز کے ہیں جہا ں مر یض کو جب آپر یشن کے لیے لے جا یا جا تا تھا تو جیسے ہی اس تھیٹر میں لے جا تے ہیں اس کے فوراً بعداندر سے پر چیا ں آنا شر وع ہو جا تی ہیں کہ یہ دو ا لاﺅ یہ انجکشن لا ﺅ یہا ں تک کہ پٹیا ں بھی منگو ا ئی جا تی ہیں پر یشا ن کن با ت یہ ہے کہ جب تک آپر یشن جا ری رہتا ہے وقفے وقفے سے ادو یا ت منگو ا نے کا سلسلہ جا ری رہتا ہے وہ ایک با ر ادو یا ت نہیں منگو ا تے بلکہ یہا ں ایسا بھی ہو تا ہے کہ مر یض اٹینڈ نٹ سے ادو یا ت زیا دہ مقد ار میں منگو ائی جا تی ہیں جو اس کی ضرورت سے زیا دہ ہو تی ہیں یہ ان کے سا تھ ایک اور زیادتی ہے ان اضا فی ادو یا ت کا کیا جا تا ہے بھی ایک اہم سو الیہ نشا ن ہے اس کے سا تھ سا تھ سر کا ری ہسپتا لو ں میں صفا ئی کا بھی شد ید فقد ان ہے شہر کے سب سے بڑے سو ل ہسپتا ل کے شعبہ حا دثا ت کے کمر و ں کی حا لت دید نی ہے جہا ں نہ صر ف ایک عر صہ سے دیو ا رو ں در وا ز و ں پر کوئی ڈسٹمبر اور رو غن با لکل نہیں کیا گیا اس میں جگہ جگہ کچر ا پڑ ا ہو ا ہو تا ہے اور کیٹر و ں مکو ڑو ں کا بھی را ج ہے۔
ہم سمجھتے ہیں کہ یہ بہت ہی افسو سنا ک صو رتحال ہے اس کا تد ار ک کو ن کر ے گا؟ویسے تو حکومت صحت کے معا ملے کو بہت اہمیت دینے کے دعو ے تو بہت کر تی ہے اس کے بجٹ میں اضا فے کی با تیں بھی ہو تی ہیں لیکن اس پر عملی طو ر پر کوئی اقد امات نہیں ہو رہے جو کہ ایک بڑ ا لمحہ فکر یہ ہے۔
حا ل ہی میں صو بائی حکومت نے ایک ایئر ایمبو لینس خر ید نے کا فیصلہ کیا ہے جس کی قیمت ڈھا ئی ار ب رو پے ہے اگر حکومت ایک ایئر ایمبو لینس اتنے مہنگو ں دا مو ں خر ید رہی ہے تو اس کا کیا فا ئد ہ ہو گا اگر اسی رقم سے سر کا ری ہسپتا لو ں کی حا لت زا ر بہتر کی جا ئے عوا م علا ج کے حوا لے سے مسائل حل کئے جا ئیں اور سب سے اہم با ت یہ ہے کہ کوئٹہ جیسے اہم شہر میں نہ ہی کوئی کینسر ہسپتا ل ہے اور نہ ہی امر ا ض قلب کا کوئی با قا عد ہ ہسپتا ل ہے جس کے باعث مر یضو ں کو ملک کے دیگر شہر و ں میں جا نا پڑ تا ہے اور وہ اس طر ح اپنی جمع پو نجی سے محر وم ہو جا تے ہیں۔
اس لیے یہا ں ضرورت اس امر کی ہے کہ صو بائی حکومت اور خصو صاً وزیر اعلیٰ بلوچستا ن جا م کما ل خان جن کے پا س محکمہ صحت کا قلمد ان بھی ہے کو ان اہم مسا ئل پر خصو صی تو جہ دینی چا ہیئے تا کہ یہ حل ہو ں اور غر یب عو ام کو علا ج معا لجے کی سہو لت میسر ہو سکے۔
٭٭٭٭٭٭٭

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*