وفا ق کا بلوچستا ن سے ایک اور وعد ہ

گذشتہ رو ز اسلا م آبا د میں بلوچستا ن عوامی پا رٹی کے ایک وفد سے ملا قا ت کے دوران وزیر اعظم عمر ان خان نے ایک با ر پھر بلوچستا ن کے احسا س محر ومی کے خا تمے کو او لین تر جیح قر ار دیتے ہوئے ایک اور وعد ہ کر لیا اس موقع پر وزیر اعظم عمر ان خان نے وا ضح کیا کہ بلوچستا ن میں تر قیا تی منصو بوں پر خصو صی تو جہ اور اس کے سا تھ سا تھ حکومت کو رونا صو رتحال میںمعا شی استحکام کیلئے کو شا ں ہے وفد نے بلوچستا ن کے تر قیا تی منصو بوں میں کٹو تی پر تحفظا ت با رے وزیر اعظم عمر ان خان کو آگا ہ کیا جس کے جو اب میں وزیر اعظم عمر ان خان نے حسب معمو ل اور حسب رو ایت ایک با ر پھر وہی پر انا جملہ استعمال کر تے ہوئے تحفظا ت جلد دور کرنے کی یقین دہا نی کر دی ملا قا ت کے دوران بلوچستا ن عوامی پا رٹی نے یقین دہانی کے بعد بجٹ میں وفا قی حکومت کو ووٹ دینے کا فیصلہ کیا۔
وز یر اعظم عمر ان خان کی جا نب سے بلوچستا ن کے احسا س محر ومی کو ختم کر نے کا ایک اور وعد ہ کوئی نئی با ت نہیں ہے کیو نکہ ایسا کرنا بلوچستا ن کے سا تھ ایک رو ایت بن چکی ہے نہ صر ف مو جو دہ حکومت اس پر عمل پیر ا ہے بلکہ سا بقہ حکومتوں کا بھی بلوچستا نکے سا تھ یہی وطیر ہ رہا ہے وفا ق میں جس پا رٹی کی بھی حکومت آئی ہے اس نے بلوچستا ن کے مسائل کو کبھی سنجید ہ نہیں لیا اور اس طرح ملک کا رقبہ کے لحا ظ سے اور معد نیا ت سے مالا ما ل صو بہ پسما ند گی کا شکا ر ہے جس کی اہم وجہ یہ ہے کہ اس صو بے کو کبھی اہمیت ہی نہیںدی گئی اسے مسلسل نظر اند از کیا جا تا رہا اس سے صر ف وعد ے اور مسائل کے حل کی یقین دہا نیا ں ہی کر ائی جا تی رہیں اس صو بے سے نہ صر ف سا بقہ حکومتیں وعد ے کر تی رہیں بلکہ موجو دہ حکومت کے وزیر اعظم عمر ان خان الیکشن سے پہلے اور بعد میں بھی بلوچستان اور اس کے عوام کے احسا س محر ومی کے خا تمے کے دعو ے کر تے رہے اس سلسلے میں وفا قی وزر اءبھی بیا ن دیتے نہیں تھکتے لیکن افسو س کی با ت یہ ہے کہ ان پر عملی طو ر پر کوئی اقد اما ت نہیں کئے جاتے۔
بلوچستان نیشنل پا رٹی مینگل نے وفا قی حکومت سے صر ف اسی پو ا ئنٹ پر اتحا د کیا تھا کہ وہ بلوچستا ن کے مسا ئل حل کر ے گی اس نے اپنی پا رٹی کی جا نب سے 6 نکا ت پیش کئے لیکن وفا قی حکومت نے 2 سا ل کا عر صہ گذ رنے کے با و جو د ان پر عمل در آمد نہ کیاجس کے بعد مجبو ر اً پا رٹی کے سر بر اہ سر دا ر اختر مینگل نے اسمبلی کے فلو رپر حکومت سے علیحد گی کا اعلا ن کیا بلوچستا ن عوامی پا رٹی کے بھی صوبے کے با رے میں تحفظا ت تھے جن کی بناءپر پا رٹی کے وفد نے وزیر اعظم عمر ان خان سے ملا قا ت کی اور اس میں ایک با ر پھر وزیر اعظم عمر ان خان نے صو بے کے مسا ئل کے حل کی یقین دہا نی کر ائی جس کے جو اب میں بلوچستا ن عوامی پا رٹی نے وفا قی بجٹ میں حکومت کی حما یت کا فیصلہ کیا۔
ہم سمجھتے ہیں کہ جس طرح بلوچستا ن عوامی پا رٹی نے صر ف ایک یقین دہا نی پر فو راً حکومت کابجٹ میں حما یت کا اعلا ن کیا ہے اس کے جو اب میں وفا قی حکومت اور وزیر اعظم عمر ان خان کو بھی فو ری طور پر بلوچستا ن کے مسائل کے حل کیلئے اقد اما ت کرنے چا ہئیں اگر وہ ایسا نہیں کر تی تو یہ سر ا سر وعد ے خلا فی ہو گی جو کہ بلا شبہ ایک قا بل مذمت اقد ام ہو گا ۔

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*