کوئٹہ میں گیس پریشر میں مسلسل کمی اور ز یا دہ بل

صوبائی دار الحکومت کوئٹہ کے اکثر علا قو ں میں سوئی گیس کے پر یشر میں مسلسل کمی پائی جا رہی ہے جس کے با عث ایک جانب سردی کی وجہ سے عوام کو شد ید مشکلا ت کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے جبکہ دوسر ی جانب خواتین کو امور خانہ دا ری سرانجام دینے میں بھی دشوار ی ہو رہی ہے شہر کے اکثر علا قو ں میں صبح اور پھر را ت کے وقت گیس پر یشر میں کمی اور اکثر اوقات گیس بالکل بند ہو جا تی ہے جو کسی بھی بڑ ے حا د ثے کا با عث بن سکتی ہے۔
افسو سناک با ت یہ ہے کہ صوبا ئی دار الحکومت کوئٹہ میں گیس پر یشر میں کمی اور لو ڈ شیڈ نگ کاعمل گذ شتہ کئی سا لو ں سے مسلسل جا ری ہے لیکن اس کا سد با ب نہیں ہو رہا ہے ح©ا لا نکہ صا رفین ہر سا ل متعلقہ حکام سے اس سلسلے میں اقدامات کر نے کیلئے با ر با ر آگا ہ کر تے ہیں لیکن محکمے کی جا نب سے صر ف تسلیا ں اور یقین دہا نیا ں کرائی جا تی ہیں اور اس طر ح© مو سم سر ما گذرجا تا ہے لیکن یہ مسئلہ جو ں کا تو ں ہی رہتا ہے اور پھر اگلے سال مو سم سرما کے آغاز کے سا تھ ہی یہ عمل دوبا رہ شر وع ہو جا تا ہے کیو نکہ افسو س کی با ت یہ ہے کہ اس دوران محکمہ اس سلسلے میں کچھ نہیں کر تا حا لا نکہ ان کو اس درمیانی عر صے میں اس مسئلے کے حل کیلئے اقدامات کرنے چا ہئیں لیکن وہ ایسانہیں کر پا تا جو یقینا اس محکمے کی بہت بڑ ی نا کامی ہے جس پر اس کو قا بو پانے کیلئے اقدامات کرنے چا ہئیں۔
ایک اور اہم مسئلے کا ذکر بھی یہا ں کرنا ضروری ہے کہ کوئٹہ کے عوام کو سوئی گیس کے بلو ں کے سلسلے میں بھی کافی دشو اریو ں کا سا منا ہے جس میں آئے دن بھا ری جر مانے لگا کر صا رفین کو بھیج دیئے جا تے ہیں جن میں میڑٹیمپر نگ کا جواز بنا یا جا تا ہے حا لانکہ اکثر صا رفین کا مو قف ہے کہ وہ میڑ و ں میں کوئی چھیڑ چھا ڑ نہیں کر تے م©حکمے والے اتا ر کر لے جا تے ہیں اور ان کی غیرمو جو دگی میں لیبار ٹر ی کر کے ان پر ہز ارو ں روپے جر مانہ عا ئد کر دیا جا تا ہے اس کے سا تھ سا تھ صا رفین میڑ وں کی تیز رفتا ری کی بھی شکا یات کر تے ہیںجبکہ دوسر ی جانب مح©کمہ ان تما م با تو ں کو مستر د کر تے ہوئے عوام سے بلو ں کی وصولی کا تقا ضہ کر تا ہے وہ اس سلسلے میں عوام کی کوئی  با ت نہیں ما نتے۔
اس لیے یہا ں ضرورت اس امر کی ہے کہ سوئی سدرن گیس کمپنی کے حکام کو صو بائی دا ر الحکومت کوئٹہ سمیت صو بے بھر کے عوام کو اس عذا ب سے چھٹکا رے کیلئے احسن اقدامات کرنے چا ہئیں تا کہ وہ اس مشکل سے نجا ت پا سکیں کیو نکہ افسو س نا ک با ت یہ ہے کہ سوئی گیس بلوچستا ن سے ہی نکلتی ہے لیکن یہا ں کے عوام کو اس سلسلے میں کوئی ریلیف نہیں دیا جا تا۔

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*