تازہ ترین

یو ٹیلٹی سٹو ر ز پر عو ام کو اشیا ئے ضروریہ کی فر اہمی کے اقد اما ت

گذشتہ رو ز چیف سیکر ٹر ی بلوچستان مطہر نیا ز را نا کی زیر صد ارت یو ٹیلٹی سٹو ر ز اور رمضان المبا رک میں سستے با زا روں کے انعقا د کے حوالے سے اجلا س منعقد ہو ا جس میں یوٹیلٹی سٹو ر ز اور سستے با زاروں میں اشیا ئے ضروریہ کی فر اہمی سے متعلق امو ر کا جا ئز ہ لیا گیا اس مو قع پر اجلا س سے خطا ب کر تے ہوئے چیف سیکر ٹر ی مطہر نیا ز را نا نے کہا کہ رمضان المبا رک میں یو ٹیلٹی سٹو ر ز پر عو ام کو اشیا ئے ضروریہ کی فر اہمی کیلئے اقد اما ت کئے جائیں صو بے کے جن اضلا ع میں یو ٹیلٹی سٹو ر ز قا ئم نہیں ہیں ان میں مو بائل سٹو ر ز چلا ئے جا ئینگے تا کہ عو ام کو ان کی دہلیز پر سہو لت میسر ہو سکے انہوں نے کہا کہ رمضان المبا رک کے دور ان عو ام کو سبسڈائز نر خو ں پر اشیا ئے خو ر د و نو ش کی فر اہمی کیلئے صو بائی حکومت کی جا نب سے سستا با زا ر کے قیام کے لیے تما م تیا ریاں مکمل کر لی گئی ہیں جس میں صو بے کے ہر ضلع میں عو ام کو سر کا ری نر خوں میں اشیاءکی فر اہمی یقینی بنا ئی جا ئے گی۔
یو ٹیلٹی سٹو ر ز پر عو ام کو اشیا ئے ضروریہ کی فر اہمی کے سلسلے میں اقد اما ت اور رمضان المبا رک میں سستے با زا روں کا انعقا د بہت ہی نا گز یر ہے اس سلسلے میں ہونے والا مذکو رہ اجلا س خو ش آئند اقد ام ہے ایسے اجلاسو ں کا ہونا بہت ضروری ہے کیو نکہ اس سے قبل بھی پہلے رمضان المبا رک کے مہینو ں میں عو ام کو یو ٹیلٹی سٹو ر ز اور رمضان سستے با زا روں سے کوئی خا ص خا طر خو اہ ریلیف نہیں مل سکا تھا۔
گذشتہ سا لو ں بھی یو ٹیلٹی سٹو ر ز پر رمضان پیکج کا اعلا ن کیا گیا مگر رمضان المبا رک کے پور ے ما ہ کے دوران ان پر اشیا ءخو ر د ونو ش کی مکمل دستیا بی ممکن نہ بنا ئی جا سکی ان میں سے اکثر اشیا ءسٹو ر ز پر دستیا ب نہیں تھیں اس کے سا تھ سا تھ صو بائی حکومت کی جا نب سے جو رمضان سستے با ز اروں کے انعقا د کے اعلان کئے تھے ان میں ایسا ہو ا کہ اکثر مقا ما ت پر سستے با زار کے لیے لگائے گئے خیمے پو را ما ہ خالی رہے وہاں کوئی سٹا ل نہ لگا ئے جا سکے عو ام پو ر ا ما ہ انتظا ر میں رہے۔
اب یہاں ضرور ت اس امر کی ہے کہ اس سا ل یو ٹیلٹی سٹو ر ز پر تما م ضروری اشیا ءخو ر د و نو ش کی فر اہمی کو یقینی بنا یا جائے اس کے سا تھ سا تھ جو اشیا ءیو ٹیلٹی سٹو ر ز پر فر اہم کی جا تی ہیں ان کے معیا ر کی بہتری کا بھی خیال رکھنا چا ہیئے اسی طرح سستے رمضان با ز ا رو ں کا انعقا د یقینی بنا یا جائے حکومت کو نہ صر ف مذکو رہ اقد اما ت کو یقینی بنا نا چا ہیئے بلکہ عا م ما رکیٹ پر بھی چیک اینڈ بیلنس کا نظام را ئج کرنا چا ہیئے کیو نکہ تاجر اور ذخیر ہ اند و ز رمضان المبا رک کے مقد س ما ہ کا کوئی احترام نہیں کر تے بلکہ اس میں وہ عوام کو دونوں ہاتھوں سے لوٹتے ہیں وہ اس میں آ زا دی سے یہ کام کر تے ہیں کیو نکہ ان کو پو چھنے والا کوئی نہیں ہو تا اس لیے حکومت اور متعلقہ ادا روں کو اس سلسلے میں اپنے فر ائض سر انجا م دیتے ہوئے عوام کو ہر ممکن ریلیف دینے کے اقداما ت کرنے چاہئیں۔

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*