تازہ ترین

یورپ خطرے میں ہے،یورپی یونین کا نیافوجی ڈاکٹرائن پیش

برسلز (م ڈ)یورپی یونین کی خارجہ پالیسی کے سربراہ جوسیپ بوریل نے بلاک کو خبردار کیا ہے کہ اسے بیرون ملک مشترکہ فوجی کارروائیوں کی بنیاد کے لیے ایک پختہ اور پْرعزم نظریے (ڈاکٹرائن) سے اتفاق کرنا ہوگا۔اس نئے نظریے کے تحت کسی جگہ وقتِ ضرورت تعیناتی کے لیے دستیاب ایک ہنگامی فورس بھی تشکیل دی جائے گی۔میڈیارپورٹس کے مطابق جوسیپ بوریل نے صحافیوں کو بتایا کہ”اسٹریٹجک کمپاس“کے نام اس فوجی نظریے کا پہلا مسودہ؛ یورپی یونین کوفوجی اصول کے قریب تربنانے اورنیٹو کے ”اسٹریٹجک تصور“کے مترادف ہوسکتا ہے۔یہ اتحاد کی سلامتی کے تحفظ کے لیے انتہائی اہم اہداف طے کرے گا۔بوریل نے یورپی یونین کی رکن 27 ریاستوں کو بحث کے لیے بھیجی گئی حکمت عملی دستاویز کے پیش لفظ میں کہا کہ ”یورپ خطرے میں ہے۔“ انھوں نے صحافیوں سے گفتگو میں یہ بھی کہا کہ ہمیں تیزی سے فوج تعینات کرنے کی صلاحیتوں میں اضافے کی ضرورت ہے۔انھوں نے اس بات پر زوردیتے ہوئے کہاکہ ایک خیال یہ ہے کہ یورپی یونین کی 5000 ارکان پر مشتمل بحرانی سپاہ ہمہ وقت موجود ہو، اگرچہ امریکا کی قیادت میں نیٹواتحاد بنیادی طور پر یورپ کے اجتماعی دفاع کا ذمے دار ہے۔جوزسیپ بوریل کا کہنا تھا کہ ہماری ایک تزویراتی ذمے داری ہے۔

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*