تازہ ترین

گو ادر پاکستان کا فو کل پو ائنٹ

وزیر اعظم عمر ان خان کا گذشتہ رو ز اپنے دورہ گو ادر کے مو قع پر ایک تقر یب سے خطا ب کر تے ہوئے کہنا تھا کہ گو ادر پاکستان کا فو کل پو ائنٹ بننے جا رہا ہے جس سے سا رے پاکستان با لخصو ص بلوچستان کا فا ئد ہ ہو گا گو ادر میں انٹر نیشنل ائیر پو رٹ کی تعمیر سے اس کا رابطہ وسیع ہو گا ما ضی میں کبھی بر آمد ات پر مبنی نمو پر توجہ نہیں دی گئی کوئی ملک صحیح معنو ں میں تر قی اس وقت تک نہیں کر سکتا جب تک وہ تما م علا قو ں میں بر ابر ی کی تر قی نہ کر ے ہما ری کو شش ہے کہ اپنے معا شی زو نزمیں سر مایہ کا رو ں کو دعو ت دیں بلوچستان کے لیے 730 ار ب رو پے کا تا ریخی پیکج دیا ہے۔
اس میں کوئی شک نہیں کہ گو ادر پاکستا ن کا فو کل پو ائنٹ بننے جا رہا ہے اور اس کے فوائد نہ صر ف بلوچستان بلکہ پو رے ملک کو ملیں گے گو ادر میں انٹر نیشنل ائیر پو رٹ کی تعمیر سے اس کا را بطہ وسیع ہو گا گو ادر اور خصو صاًسی پیک پاکستا ن سمیت خطے کی خو شی کی ضما نت ہے۔
جہاں تک کسی بھی ملک کے تر قی تما م علا قو ں کی تر قی سے وا بستہ ہو نے کی با ت ہے تو یہاں اس با ت کا ذکرکرنا از حد ضروری ہے کہ سا بقہ حکومتو ں نے بلوچستان کو نظر اند از کر کے ملک کے دیگر صو بو ں کو تر قی دی جس کے نتیجے میں بلوچستان پسما ند گی کا شکا ر ہو گیا اس اہم صو بے کے مسائل پر کسی نے بھی غو ر نہیں کیا جو حکمر ان بھی آیا اس نے ہمیشہ اس کو ترقی دینے کے دعو ے اور وعد ے کئے اس طرح عو ام کے احسا س محرومی کے خا تمے کی بھی با تیں کر تے رہے لیکن عملی طو ر پر اس سلسلے میں کچھ نہ کیا گیا اب صو بے میں سی پیک کے آغا ز ہونے سے صو بے کی تر قی کے آثا ر پید ا ہو رہے ہیں جو کہ قا بل تعر یف با ت ہے اس لیے اس پر خصو صی توجہ دینے کی ضرورت ہے۔
وزیر اعظم عمر ان خان کی صو بے کے لیے 730ار ب روپے کے تا ریخی پیکج کی با ت قا بل تعر یف ہے انہوں نے یہ صو بے کے لیے بہت ہی اچھا کام کیا ہے جو یقینا صو بے کی تر قی کے لیے کا ر آمد ہو گا اس کے سا تھ سا تھ معا شی زونز میں سر مایہ کا رو ں کو دعو ت دینا بھی اچھی با ت ہے جب یہاں سر ما یہ کا ری ہو گی تو یقینا صو بے میں نہ صر ف بیر و زگا ری کا خا تمہ ہو گا بلکہ صو بہ تر قی کی را ہ پر گا مز ن ہو گا اس کے لیے سرمایہ کا رو ں کو یہاں سر مایہ کا ری کر نی چاہیئے کیونکہ حکومت بلوچستان نے با ر ہا مر تبہ سر مایہ کا روں کو ہر قسم کے تحفظ دینے کی با ت کی ہے اس لیے سر مایہ کا رو ں کو بلا جھجک صو بے میں سر مایہ کا ری کرنی چا ہیئے بلکہ اگر یہاں کے مقا می سر مایہ کا ر یہ کام کر یں تو بہت ہی بہتر ہے کیونکہ ایسا کرنا ان کے اور صو بے کے بہترین مفا د میں ہے بلوچستان کے سر مایہ کا ر دیگر علا قو ں اور صو بوں میں سرمایہ کا ری کر رہے ہیں اب ان کو اس سلسلے میں اپنے صو بے کو تر جیح دینی چا ہیئے۔
امید کر تے ہیں کہ وزیر اعظم عمر ان خان بلوچستان کی تر قی کے لیے اپنے کئے گئے وعد و ں کو عملی جا مہ پہنا ئیں گے اور اس اہم صو بے کو ملک کے دیگر تر قی یا فتہ صو بوں کے بر ابر لانے کے لیے اقد اما ت کر یں گے کیونکہ یہاں کی عو ام کو اس سلسلے میں ان سے کافی امیدیں وا بستہ ہیں۔

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*