تازہ ترین

گورنر اسٹیٹ بینک کے بیان پر کراچی چیمبر آف کامرس کا تشویش کا اظہار

کراچی (این این آئی) گورنر اسٹیٹ بینک کیبیان پر کراچی چیمبر آف کامرس نے تشویش کا اظہار کرتے ہوئے خدشہ ظاہر کیا ہے کہ آنے والے دنوں میں شدید بحران اور مہنگائی کا سیلاب نظر آرہاہے جبکہ گیس کے بحران سے ملکی برآمدات بھی متاثر ہونے کا اندیشہ ہے۔کراچی چیمبر آف کامرس کے صدر محمد ادریس نے کہاہے کہ اوورسیز پاکستانی تقریبا 8 ارب ڈالر بھیجتے ہیں لیکن اسکے باوجود ڈالر کی قدر میں 11فیصد کا اضافہ ہوا، ڈالر کی بڑھتی ہوئی قدر کی وجہ سے امپورٹ بل میں 65فیصد کا اضافہ بھی انتہائی تشویش ناک ہے۔انہوں نے کہاکہ غلط پالیسی کو صحیح ثابت کرنے سے گریز کیا جائے اور چند لوگوں کو فائدہ پہنچانے کے بجائے ملک کے وسیع تر مفاد میں اقدامات اٹھائے جائیں، ڈالر کی بڑھتی ہوئی قدر کا معمولی فائدہ بے پناہ نقصانات ہیں، ڈالر کی اونچی اوڑان 152روپے سے شروع ہوئی اور اب 174تک جا پہنچا ہے جس سے بیرونی قرضوں کاحجم بڑھ کر 13.5 ارب ہوگیا۔انہوں نے کہا کہ پاکستان اشیائے خوردونوش، اجناس اور برآمدات کا خام مال بھی درآمد کرتاہے جن کی لاگت ڈالر کی اڑان کی وجہ بڑھ گئی ہے۔ اس سہ ماہی میں تقریبا 19 ارب ڈالر کی درآمدات ہوچکی ہیں جو پچھلے سال 11ارب تھیں، درآمدات کا حجم کم و بیش اتنا ہی ہے لاگت بڑھ گئی ہے جو مہنگائی کاباعث ہے۔انہوں نے کہاکہ مہنگائی اگر اسی طرح بڑھتی رہی تو ہم برآمدات بھی نہیں کر پائیں گے، وزیر اعظم، وزیر خزانہ تمام اسٹیک ہولڈرز کو ساتھ لے کر چلیں، ملک کو معاشی بحران سے نکالنے کے لئے مشاورت سے فیصلے کیے جائیں کیونکہ ہم وینٹیلٹر پر ہیں اور ملک کی سیاسی، اقتصاددی اور معاشی حالت بہت خراب ہے۔

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*