تازہ ترین

کوئٹہ ایک جد ید گائنی اور او پی ڈی سے محروم

حکومت کی جانب سے عو ام کو صحت کی سہولتوں کی فر اہمی اولین تر جیح ہونی چا ہیئے کیونکہ” انسان ہے تو جہاں ہے“اس لیے حکومت کو اس اہم شعبے کی جا نب خصوصی توجہ دینے کی اشد ضرورت ہے لیکن بد قسمتی سے صو بائی دار الحکومت کوئٹہ میں مو جو د سرکاری ہسپتا لوں میں اب تک سہو لتو ں کا فقد ان ہے جس کے باعث غر یب عو ام کو علا ج و معا لجہ میں شد ید دشوار یو ں کا سا منا کرنا پڑ رہا ہے ان میں مر یضو ں کو سہولتوں کی فر اہمی بھی صحیح طر یقے سے نہیں ہو پا رہیں گذشتہ رو ز گو ر نر بلوچستان سیدظہور احمد آغا نے پر و فیسر ڈاکٹر عا ئشہ صد یقہ کی قیاد ت میں ڈاکٹر ز کے وفد سے بات چیت کر تے ہوئے کہا کہ صو بائی دارالحکومت کوئٹہ ایک جد ید گائنی اور او پی ڈی سے محر وم ہے اس لیے کوئٹہ میں سر دست ایک جد ید گائنی اور او پی ڈی چا ہیئے اس کے سا تھ سا تھ سو ل سنڈ یمن ہسپتا ل کوئٹہ میں گائنی وا ر ڈ کے لیے جگہ کی تنگی او ر سہو لیا ت کے فقد ان نے صو ر تحال کو مز ید ابتر کر دیا ہے گائنی جیسے حسا س اور اہم وا ر ڈ میں صحت و صفائی کی ابتر صو ر تحال باعث تشویش ہے اس لیے یہاں بہتر ین طبی سہو لیا ت کی فر اہمی کو یقینی بنایا جا ئے۔
گو رنر بلوچستان سید ظہو ر احمد آغا کا مذکو رہ بیان بلا شبہ قابل تعر یف ہے انہوں نے ایک ایسے اہم مسئلے کی بات کی ہے جس پر ہم نے بھی متعد د با ر ان ہی سطو ر میں ذکر کیا ہے اس میں کوئی شک نہیں ہے کہ اس وقت سو ل ہسپتا ل کوئٹہ جو شہر کے وسط میں وا قع ہے میں سہولتوں کا شد ید فقد ان ہے جہاں تک گائنی وا ر ڈ کی بات ہے تو اس کی حالت وا قعی قا بل تشو یش ہے یہاں پر صفائی کی ابتر صو ر تحال کے سا تھ سا تھ وہاں مو جو د سٹاف کی حا ضری کو بھی 24 گھنٹے یقینی بنا نے کی اشد ضرورت ہے کیونکہ یہ نہا یت ہی اہم شعبہ ہے یہاں پر ڈاکٹر ز اور دیگر سٹا ف کی ڈیو ٹی پر چیک اینڈ بیلنس ہونا چا ہیئے۔
گو رنر بلوچستان سید ظہو ر احمد آغا نے گائنی وا ر ڈ کی جو با ت کی ہے تو یہ بھی حقیقت پر مبنی ہے ا س میں تو سیع کے سا تھ سا تھ جدید سہو لتو ں سے وا بستہ ہونا چا ہیئے اس میں کسی بھی چیز کی کمی نہیں ہونی چا ہیئے اس میں ادویا ت کی فر اہمی بھی یقینی ہونے کی ضرور ت ہے کیونکہ ہوتا یہ ہے کہ مر یض وہاں پڑ ا ہو ا ہو تا ہے لو احقین کو با ہر سے دوائیاں لینے کے لیے بھیج دیا جا تا ہے ایک با رنہیں بلکہ با ر با ر بھیجا جاتا ہے جوکہ بڑ ے افسو س کی با ت ہے حالانکہ حکومت ادویا ت کی فر اہمی کے وعد ے کئی با ر کر چکی ہے لیکن اس پر عمل در آمد نہیں ہو رہا۔
او پی ڈی سر کا ری ہسپتا لو ں میں بڑ ا اہم شعبہ ہے جہاں دن میں ہز ارو ں مر یض نہ صر ف کوئٹہ شہر بلکہ دو ر در از علا قو ں سے آکر چیک اپ کر اتے ہیں مگر اس میں سب سے زیا دہ اہم مسئلہ اس کی ٹا ئمنگ کا کم ہونا ہے کیونکہ صرف چند گھنٹو ں کی او پی ڈی میں سب مر یضو ں کو چیک نہیں کیا جا سکتا اس لیے اس کی ٹا ئمنگ اور اس میں بیٹھنے والے ڈاکٹر و ں کی تعد اد بڑھا نی چا ہیئے۔
امید ہے کہ وزیر اعلیٰ بلوچستان جا م کمال خان جو صحت کے شعبے میں بہتر ی لانے کے خو اہاں ہیں سر کاری ہسپتالو ں میں جد ید سہو لتو ں کی فر اہمی کو یقینی بنا نے کے لیے متعلقہ حکام کو ہدایات دیں گے اور پھر ان پر چیک اینڈ بیلنس بھی رکھیں گے۔

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*