تازہ ترین

کلبھو شن یا دیو کو قو نصل رسا ئی کی فراہمی

پاکستان نے گذشتہ روز ہند وستانی جا سو س کلبھو شن یا دیو کو قو نصل رسائی دی اور اس طر ح ہندوستا نی ڈپٹی ہائی کمشنر نے اڑھائی گھنٹے ملا قا ت کی اس مو قع پر پاکستا ن کی جا نب سے ڈائر یکٹر جنرل ہندوستانی امور فر یحہ بگٹی بھی مو جود تھیں ہندوستانی جا سو س کلبھوشن یا دیو نے جیل میں دستیا ب سہو لتو ں اوررو یے پر اطمینا ن کا اظہار کیا جبکہ ہندوستانی سفا ر تکا ر نے کلبھو شن یا دیو کو جیل میں دستیا ب صحت سمیت دیگر سہو لیا ت کے با ر ے میں در یا فت کیا اور سزا کے معا ملا ت پر بھی با ت چیت ہوئی۔
پاکستان نے عالمی عدالت انصاف کے فیصلے پر عمل در آمد کرتے ہوئے ہندوستانی جا سو س کلبھو شن یا دیو کو قو نصل رسائی دے کریہ ثابت کر دیا ہے کہ وہ نہ صرف عالمی عدالت انصاف کے فیصلو ں کا احترام کر تا ہے بلکہ وہ خطے میں امن کا خواہشمند ہے وہ ہندوستان سمیت اپنے ہمسایہ مما لک کے سا تھ ا چھے تعلقات کا خو اہا ںرہا ہے اس نے ایک ہندوستانی پا ئلٹ ابھی نند ن کو بھی خیر سگا لی کے جذبے کے تحت صرف ایک روز کے بعد ہندوستا ن کے حوالے کیا تھا اور اب ہندوستانی جا سو س کلبھو شن یا دیو جو پاکستان میں ہونیوالی اکثر تخر یب کا ری کی وا ر داتو ں میں بر اہ راست ملو ث رہا ہے اور اس کو پاکستان میں سزائے مو ت کی سزا سنا ئی جا چکی ہے اس معا ملے کو ہندوستا ن عا لمی انصاف میں لے گیا جس پر اس نے اپنے فیصلے بھی کلبھو شن یا دیو کو جا سو س قر ار دیا تھا اس کے سا تھ سا تھ اس نے اسے قو نصل رسائی دینے کا حکم بھی دیا تھا جس پر پاکستان نے عمل در آمد کر کے دنیا کے سا منے اپنی حقیقت وا ضح کر دی ہے جبکہ دوسر ی جانب ہندوستا ن نے اس کے جوا ب میں کئی پاکستا نیو ں کو جن میں اکثر غلطی سے سر حد پار چلے گئے تھے وہاں ما ر دیا تھا اس طر ح ہندوستا ن نے پاکستا ن کی خیر سگا لی کے بد لے اپنا اصل چہر ہ دنیا کو بتا دیا کہ وہ پاکستان کے سا تھ کسی بھی قسم کے تعلقا ت کا خوا ہا ں نہیںوہ صر ف اس کے اختلا فات کو پر وان چڑ ھا کر خطے میں عدم استحکام پید ا کرنے کی کو شش میں لگا رہتا ہے اس نے مقبو ضہ کشمیر میں بھی اپنے مظالم کی انتہا کر دی ہے پاکستان نے کشمیر سمیت تما م مسائل پر اس کو ہمیشہ مذ اکر ات کی با ر ہا مر تبہ پیش کش کی مگر اس نے ہر با ر کوئی نہ کوئی بہانہ بنا کر اس سے راہ فرار اختیار کی جو اس با ت کی غما ری کر تا ہے کہ ہندوستا ن خطے میں عدم استحکام چا ہتے ہوئے پاکستا ن سے کسی بھی قسم کے کوئی مذاکرات نہیں کر نا چا ہتا کیونکہ ایسا کرنے سے اسے مقبوضہ کشمیر سے اپنی افواج کو فو ری طو رپر نکا لنا ہو گا جوہندوستان کبھی نہیں کر ے گا لیکن اب جس انداز سے مقبو ضہ کشمیر کی تحر یک آزادی نے زور پکڑ ا ہے اور جس کو حکومت پاکستان نے عا لمی اور دیگر اہم فو رمز پر اٹھایا ہے جس کے مثبت نتا ئج بر آمد ہو ں گے اور ہندوستان کو اپنی افواج فور ی طو رپر بلا نی پڑ یں گی کیو نکہ اس کے پا س اس کے علا ہ کوئی چا رہ نہیں ہے۔

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*