تازہ ترین

چین کی وائرلوجسٹ کی کورونا لیب سے لیک ہونے کے الزامات کی تردید

بیجنگ(م ڈ)ووہان کی وائرلوجسٹ ڈاکٹر شائی زینگلی نے ان دعوﺅں کی تردید کی ہے کہ نیا کورونا وائرس ووہان انسٹیٹوٹ آف وائرلوجی نے تیار کیا تھا۔امریکی اخبارسے بات کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ میری لیبارٹری کبھی وائرس کے اثرات کو بڑھانے کے تجربات نہیں کرتی۔انہوں نے کہا کہ آخر میں ایسے شواہد کی پیشکش کیسے کروں جب ایسے کوئی شواہد ہیں ہی نہیں؟ میں نہیں جانتی کہ دنیا نے یہ نتیجہ کیسے نکالا اور معصوم سائنسدانوں کے خلاف باتیں کی جارہی ہیں۔انہوں نے کہا کہ لیبارٹری میں وائرس کی طاقت بڑھانے اور اس کے پھیلا کی تفصیلات چھپانے کے دعوے قیاسات ہیں جن کی بنیاد عدم اعتماد ہے۔انہوں نے مزید کہا کہ مجھے یقین ہے کہ میں نے کچھ غلط نہیں کیا، تو مجھے کسی قسم کا ڈر نہیں۔چین کی وزارت خارجہ کے ترجمان نے بھی رپورٹ کی تردید کرتے ہوئے کہا کہ امریکا کی جانب سے لیب سے وائرس لیک ہونے کے خیال کو تقویت دی جارہی ہے۔

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*