وفاقی اور صوبائی حکومتیں اپنی آئینی مدت پوری کریں گی،مبین خان خلجی

Districts_of_Balochistan,_Pakistan_with_district_names

کوئٹہ ( آئی این پی ) پارلیمانی سیکرٹری برائے اربن پلاننگ اینڈ ڈویلپمنٹ و چیئرمین کوئٹہ ڈویلپمنٹ اتھارٹی محمد مبین خان خلجی نے کہاکہ ماضی کی حکومتوں نے جتنے بیگاڑ پیدا کئے ہیں وہ ڈسپرین سے ٹھیک نہیں ہو سکتے بلکہ اس کیلئے سرجری کی ضرورت ہے، ملک کا مستقبل بے لاگ احتساب سے جڑا ہوا ہے اور اپوزیشن کو چیلنج ہے کہ حکومت کی سطح پر کرپشن کا ایک بھی کیس سامنے لائے اپوزیشن جماعتیں حکومت کیخلاف محاذ کھولنے کیلئے کوئی موثر جواز پیش نہیں کر سکیں بلکہ اپنے اپنے مفادات کے تحفظ کا راگ الاپا جاتا رہا،اپوزیشن جماعتیں ایک دوسرے پر اعتبار کرنے کیلئے تیار نہیں اورایک دوسرے کو حلف اور یقین دہانیاں کرائی جاتی ہے اپوزیشن ایسے ہی اٹھک بیٹھک کرتی رہے گی او روزیر اعظم عمران خان اور وزیر اعلی بلوچستان جام کمال خان کی قیادت میں وفاقی و صوبائی حکومتیں اپنی آئینی مدت پوری کرے گی اورپانچ سال بعد دوبارہ میدان میں آئیں گے اورعوام جو بھی فیصلہ کریں گے اسے تسلیم کیا جائے گا۔انہوں نے کہا کہ پاکستان کی بہادرفوج ملک کی سرحدوں کے دفاع کے ساتھ ملک میں امن و امان کے قیام سمیت ہر طرح کی امدادی سرگرمیوں میں بھی مصروف عمل ہیں اس لئے پوری قوم انہیں خراج تحسین پیش کرتی ہے ماضی کے حکمرانوں نے اپنی اور اپنے حواریوں کی ترقی کو ملک کی ترقی کا پیمانہ سمجھا ہوا تھا جبکہ غریب دو سے ایک وقت کی روٹی پر آ گیا تھا۔ انہوں نے کہا کہ معاشی اشاریے بہتر ہو رہے ہیں جس کا ثبوت عالمی معتبر اداروں کی رپورٹس ہیں اور خوشحالی کے اثرات بتدریج عوام کی زندگیوں میں بھی نظر آئیں گے۔

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*