تازہ ترین

وزیر اعظم کی کفا یت شعا ری کی رو ایت بر قرار

گذشتہ رو ز وفا قی وزیر مو ا صلا ت مر اد سعید نے اخر ا جا ت کے تا زہ اعد اد و شما ر جا ری کر تے ہوئے بتا یا ہے کہ وزیر اعظم آفس اور ہاﺅ س کے اخر اجا ت میں کروڑوں روپے کی بچت کی گئی ہے وزیر اعظم آفس میں پہلے سا ل 28 فیصد،دوسر ے سال 21 فیصد اور تیسر ے مالی سا ل میں 29 فیصد کمی کی گئی ہے انہوں نے بتا یا کہ وزیر اعظم عمر ان خان نے 3 سا ل میں صو ابد ید ی فنڈ سے کوئی پیسہ استعما ل نہیں کیا وزیر اعظم کا کوئی کیمپ آفس نہیں ہے اس لیے اس کے اخر اجا ت صفر ہیں اس طرح وزیر اعظم آفس کے اخر اجا ت میں کرو ڑوں روپے کی کمی مثالی اقد ام ہے حالا نکہ سا بق حکمر انوں نے وزیر اعظم آفس کے صو ا بد ید ی فنڈ کو بہا یا صر ف گفٹس پٹس اور تحا ئف کی صو ر ت میں کر و ڑو ں روپے لٹا ئے گئے انہوں ے وا ضح کیا کہ اب عو ام کا پیسہ صر ف ان پر ہی خر چ ہو گا ۔
وزیر اعظم عمر ان خان کی کفا یت شعا ری کی مذکو رہ رو ایت بلا شبہ قا بل تعر یف اقد ام ہے اگر انہوں نے مذکو رہ اہد اف حاصل کئے ہیں تو یہ ملک کے لیے بہت اچھی با ت ہے کیونکہ اس سے قبل وزیر اعظم آفس اور ہا ﺅ س میں بہت زیا دہ اخر اجا ت ہو تے تھے جو اب وزیر اعظم عمر ان خان نے بر سر اقتدا ر آکر کم کئے ہیں جوکہ یقینا ملک اور اس کی عو ام کے بہتر ین مفا د میں ہے اس طر ح وزیر اعظم عمر ان خان کا سا بقہ وزراءاعظم کے بر عکس اپنے صو ابد ید ی فنڈ سے بھی کوئی پیسہ خر چ نہ کر کے ایک مثالی اور تا ریخی رو ا یت قائم کی ہے کیونکہ یہ با ت حقیقت پر مبنی ہے کہ پہلے اب تک ملک میں ایسانہیں ہو ا ہے یہ ایک منفر د قسم کا کام ہے جس کا کریڈ ٹ وزیر اعظم عمر ان خان کو جاتا ہے انہوں نے قومی خزانے کو اس سلسلے میں کا فی فا ئد ہ پہنچا یا ہے نہ جو کہ قا بل تعر یف اقد ام ہے وزیر اعظم عمر ان خان نے بر سر اقتدار آنے سے پہلے فضول اخر اجا ت نہ کرنے کے وعد ے کئے تھے اس کے سا تھ سا تھ انہوں نے ملک سے لو ٹی ہوئی رقم کو بھی وا پس لانے کی با ت کی تھی مگر افسو س کی با ت یہ ہے کہ وہ اس میں اب تک خا طر خواہ کا میا بی حاصل نہیں کر سکے ہم اس پر ان کو نا کام نہیں کہتے ان کو اس میں حائل رکا و ٹو ں کو دو رکر نے کے لیے اقد اما ت کرنے کی شدید ضرورت ہے کیونکہ اکیلے وزیر اعظم اس سلسلے میں کامیا بی حاصل نہیں کر سکتے جب تک پوری ٹیم اس سلسلے میں ان کا سا تھ نہ دے اس لیے یہاں ضرورت اس امر کی ہے کہ تما م وفا قی وزر ائ،وزراءمملکت ،معا ون خصو صی اور مشیر و ں کو چا ہیئے کہ وہ اس سلسلے میں اپنا کر دا ر بھی ادا کریں اور وزیر اعظم عمر ان خان کا بھر پو ر سا تھ دیں اگر وہ سب یہ کرنے میں کا میا ب ہوگئے تو یہ ملک کے لیے ایک تا ریخی اقد ام ہو گا اس لیے ان تما م کووزیر اعظم عمر ان خان کے نقش قد م پر چلتے ہوئے ملک کے مفا د میں کام کرنا چا ہیئے ان کو اس سلسلے میں اپنے ذا تی مفا دا ت کوملکی مفا دا ت پر تر جیح دینی چا ہیئے جوکہ نہایت ہی ناگزیر ہے
کیونکہ سا بقہ حکمر انوں نے ملک کو مبینہ طو ر پر بے در دی سے لو ٹا اور اس پر بہت زیادہ قر ضہ چڑ ھا دیا گیا جس کے سو د کی مد میں ایک اچھی خاصی رقم ادا کی جا رہی ہے اگر تما م کا بینہ اس سلسلے میں وزیر اعظم کے ہا تھ مضبو ط کرے گی تو یہ ملک معا شی بحران سے نکل آئے گا کیونکہ ایسا ہونا اس کے لیے بہت ہی نا گز یر ہے۔

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*