تازہ ترین

وزیراعظم عمران خان کی قیادت میں مسئلہ کشمیر عالمی نوعیت کا معاملہ بن چکا ہے,شاہ محمود قریشی

وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے کہا ہے کہ دنیا 27 ستمبر کو دیکھے گی کہ وزیراعظم اور ’کشمیر کے سفیر‘ عمران خان کس طرح اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی میں (مظلوم کشمیروں) کا مقدمہ پیش کرتے ہیں۔ملتان میں متعدد منصوبوں کے سنگ بنیاد کی تقریب کے بعد صحافیوں سے بات چیت کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ عمران خان خود اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کے اجلاس میں جارہے ہیں، ان کا خطاب دنیا دیکھے گی اور پوری قوم سنے گی۔ایک سوال کے جواب میں شاہ محمود قریشی نے کہا کہ مسئلہ کشمیر سے متعلق پہلی مرتبہ 1948 میں قرارداد آئی اور اس کے یکے بعد دیگر متعدد قرارداد آئیں۔ان کا کہنا تھا کہ ’54 برس کے دوران حکومتیں آتی اور جاتی رہیں لیکن اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل میں مسئلہ کشمیر نہ اٹھ سکا‘، تاہم اب ’1965 کی جنگ کے بعد پہلی مرتبہ کشمیر کا مسئلہ سلامتی کونسل میں زیر بحث آیا‘۔انہوں نے کہا کہ اقوام متحدہ کے سیکریٹری جنرل نے بیان دیا کہ یہ مسئلہ اقوام متحدہ کی قراردادوں، چارٹر کے مطابق حل ہونا چاہیے۔بات کو جاری رکھتے ہوئے شاہ محمود قریشی نے کہا کہ وزیراعظم عمران خان کی قیادت میں مسئلہ کشمیر عالمی نوعیت کا معاملہ بن چکا ہے اور دنیا بھر کے دار الحکومتوں میں اس پر بحث ہورہی ہے۔

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*