تازہ ترین

نہتے کشمیریوں کی سیاسی ، اخلاقی اور سفارتی معاونت جاری رکھیں گے، شاہ محمود قریشی

اسلام آباد(آئی این پی)وزیر خارجہ مخدوم شاہ محمود قریشی نے کہا ہے کہ ہیومن رائٹس کونسل کے اجلاس میں شرکت کیلئے جینوا روانہ ہو رہے ہیں جہاں دنیا بھر سے آئے ہوئے مندوبین کے سامنے نہتے کشمیریوں کا مقدمہ پیش کریں گے اور انسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزیوں پر عالمی ضمیر کو جھنجوڑیں گے، مقبوضہ جموں و کشمیر کی تشویشناک صورتحال کو مختلف فورمز پر اجاگر کرنے کیلئے روابط کو مزید فروغ دینے کا فیصلہ کیا ہے ، نہتے کشمیریوں کی سیاسی ، اخلاقی اور سفارتی معاونت جاری رکھیں گے۔اتوار کو وزیر اعظم عمران خان کی خصوصی ہدایت پر تشکیل دیئے گئے “کشمیر سیل” کا دوسرا اجلاس وزیر خارجہ مخدوم شاہ محمود قریشی کی زیر صدارت وزارتِ خارجہ میں ہوا۔اجلاس میں صدر آزاد کشمیر سردار مسعود خان , وفاقی وزیر قانون بیرسٹر فروغ نسیم، سیکرٹری خارجہ سہیل محمود ،سول و عسکری حکام کے علاہ وزارتِ خارجہ کے سینیئر حکام نے شرکت کی ۔کشمیر سیل کے قیام کا مقصد مقبوضہ جموں و کشمیر کی بدلی ہوئی تشویشناک صورتحال کے تناظر میں تمام سٹیک ہولڈرز کے ساتھ مشاورت کے ذریعے سامنے آنے والی تجاویز کی روشنی میں مشترکہ لائحہ عمل مرتب کرنا ہے ۔وزیر خارجہ نے مقبوضہ جموں و کشمیر میں پانچ اگست سے جاری بدترین کرفیو اور انسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزیوں کو دنیا بھر کے سامنے لانے کیلئے ، اب تک کی جانے والی کاوشوں سے آگاہ کیا ۔وزیر خارجہ نے شرکا کو بتایا کہ وہ آج ہیومن رائٹس کونسل کے اجلاس میں شرکت کیلئے جینوا روانہ ہو رہے ہیں جہاں دنیا بھر سے آئے ہوئے مندوبین کے سامنے نہتے کشمیریوں کا مقدمہ پیش کریں گے اور انسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزیوں پر عالمی ضمیر کو جھنجوڑیں گے۔ مخدوم شاہ محمود قریشی نے کہاکہ اجلاس میں مسئلہ کو اجاگر کرنے اور مظلوم کشمیریوں پر ڈھائے جانے والے مظالم کو سامنے لانے کے حوالے سے بین الاقوامی میڈیا اور انسانی حقوق کی تنظیموں کے کردار کو سراہا گیااجلاس میں مقبوضہ جموں و کشمیر کی تشویشناک صورتحال کو مختلف فورمز پر اجاگر کرنے کیلئے روابط کو مزید فروغ دینے کا فیصلہ نہتے کشمیریوں کی سیاسی ، اخلاقی اور سفارتی معاونت جاری رکھیں گے ۔

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*