تازہ ترین

منصوبوں کی بروقت اور معیاری تکمیل کو ہر صوررت یقینی بنایا جائے

گزشتہ روز وزیر اعلیٰ بلوچستان جام کمال خان کی زیر صدارت پی ایس ڈی پی 2021-22 ءپر پیش رفت سے متعلق اجلا س منعقد ہوا جس میں سالانہ ترقیاتی پروگرام 2021-22 ءمیں شامل نئے اور جاری ترقیاتی منصوبوں کا جائزہ لیا گیا، ایڈیشنل چیف سیکرٹری منصوبہ بندی نے اجلاس کو بریفنگ دی ۔ اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے وزیر اعلیٰ جام کمال خان نے واضع ہدایت دیں کہ منصوبوں کی بروقت اور معیاری تکمیل کی ہر صورت یقینی بنایا جائے ،انہوں نے یہ بھی انکشاف کیا کہ موجودہ صوبائی حکومت نے مالی سال کے آغاز سے ہی ترقیاتی منصوبوں پر عمل درآمد شروع کرنے کی روایت ڈال دی ہے اس لیے ترقیاتی عمل کے ثمرات بروقت عوام تک پہنچانے کیلئے موثر اقدامات کئے جائیں۔
موجودہ صوبائی حکومت کی نئے مالی سال کے آغاز سے ہی ترقیاتی منصوبوں پر عمل درآمد شروع کرنے کی روایت قابل تعریف ہے۔ انہوں نے ایک اچھی روایت ڈالی ہے۔ جو اس بات کی غماز ی کرتا ہے کہ وہ صوبے میں جاری ترقیاتی منصوبوں کی بروقت اور معیاری تکمیل چاہتی ہے، اس سلسلے میں پی ایس ڈی پی 2021-22 ءسے متعلق مذکورہ ہونے والے اجلاس میں نئے اور جاری ترقیاتی منصوبوں کا جائزہ لیا گیاہے۔ وزیر اعلیٰ بلوچستان جام کمال خان نے ترقیاتی منصوبوں کی بروقت اور معیاری تکمیل کو ہر صورت یقینی بنانے کی جو ہدایت دی ہے، اس لیے متعلقہ حکام کو اس سلسلے میں احسن اقدامات کرنے چاہئیں جو کہ انتہائی ناگزیر ہےں۔ یہاں اس بات کاذکر کرنا ازحد ضروری ہے کہ نواں کلی بائی پاس کا منصوبہ کافی عرصے سے مکمل نہیں ہو پارہا حالانکہ وزیر اعلیٰ بلوچستان جام کمال خان خود اس منصوبے میں دلچسپی رکھتے تھے اور انہوں نے اس کا متعدد بار دورہ بھی کیا اور کام کی رفتار کو تیز کرنے کی واضع ہدایت دیں ، مگر افسوس کی بات ہے کہ اس کے باوجود یہ منصوبہ ابھی تک مکمل نہیں ہوا جس کی وجہ سے وہاں کے رہنے والوں کو شدید مشکلات کا سامنا ہے کیونکہ اس سے اس علاقے میں گردو غبار اڑتی رہتی ہے اور اس کے ساتھ ساتھ نواں کلی کے پہلے سٹاف پر جو روڑ چوڑا کیا گیا ہے وہ گولائی میں ہے بائی پاس کاکام مکمل نہ ہونے کے باعث یہ روڈ بھی اب تک مکمل نہیں ہوا اور اس طرح یہ سنگل روڈ ہے جہاں حادثات ہونے کا خدشہ رہتا ہے اس لیے اس روڈ کو مکمل کر کے اس چوک پر اس کو دورویہ کیا جائے تاکہ حادثات کا خدشہ ٹل سکے ۔
امید ہے کہ وزیر اعلیٰ بلوچستان جام کمال خان صوبے کی ترقی کے لیے کوشاں ہےں انہوں نے اپنے دور حکومت میں کوئٹہ شہر بھی ترقیاتی کام کروائے ہےں جن میں اہم سڑ ک جوائنٹ روڈ کی توسیع شامل ہے اب سریاب روڈ ،سبزل روڈ اور دیگر اہم سڑکوں کی توسیع کرنے کے منصوبے شروع ہو چکے ہےں جو کہ بلا شبہ قابل تعریف اقدامات ہےں۔
اس لیے یہاں ضرورت اس امر کی ہے کہ ان سڑکوں کی توسیع جلد از جلد مکمل کرنی چاہئیے اس کے ساتھ ساتھ شہر کی جو دیگر سڑکوں کو دوررویہ کرنے اوور ہیڈ پل بنانے اور دیگر ترقیاتی منصوبوں کو بھی وزیر اعلیٰ بلوچستان جام کمال خان کی ہدایت کی روشنی میں جلد شروع کرکے مکمل کیا جائے جو کہ انتہائی ناگزیر ہے

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*