تازہ ترین

دنیا کو افغان عو ام کی مد د کر نی چا ہیئے

پاکستان کے وزیر خارجہ شاہ محمو د قر یشی کا پر یس کانفر نس سے خطا ب کے دو ران دنیا کو افغان عوام کی مد د کیلئے آ گے آنے کا مشو رہ بلا شبہ قا بل تعر یف اقد ام ہے کیونکہ اس وقت افغانستان میں طا لبان نے پو رے ملک پرقبضہ کر نے کے بعد اب حال ہی میں اپنی کا بینہ کا اعلان بھی کر دیا ہے جو اب ملک کی بھا گ دو ڑ سنبھا لے گی جہاں تک دنیا کو افغان عو ام کی مد د کے لیے آ گے آنے کی با ت ہے تو اس سلسلے میں دنیا کو ایسا کرنا چا ہیئے کیونکہ ایسا کرنا وقت کی ضرورت ہے اگر دنیا اپنا کر دا ر ادا نہیں کر ے گی تو پھر یہ خطے کے لیے اچھا اقد ام نہیں ہو گا کیونکہ افغانستان میں امن کا قیا م پورے خطے کے استحکام کی ضرور ت ہے افسو س کی با ت یہ ہے کہ افغانستان جو پاکستان کا قر یبی ہمسایہ ملک ہے میں ایک عر صے سے امن واما ن کی صو رتحال خرا ب چلی آرہی تھی اب طا لبا ن نے سا بقہ حکومت کا خا تمہ کر کے ملک پر قبضہ کیا ہے اور وہاں حکومت بنا نے کا اعلان کر دیا ہے انہوں نے اپنے ہمسایہ ممالک کے سا تھ اچھے تعلقا ت قا ئم کر نے اور اپنی سر زمین کسی بھی ملک کے خلا ف استعمال نہ کر نے کافیصلہ کیا ہے افغان طا لبان نے ما ضی کے فیصلو ں کو نظر اند از کر تے ہوئے عام معا فی کا اعلان اور افغا نو ں کے حقو ق کے تحفظ کے حوالے بیانا ت دیئے ہیں جو کہ اچھا اقد ام ہے اگر چا ر دہا ئیوں کے بعد افغانستا ن میں قیام امن کی امید پید ا ہو ئی ہے اسے کھونا نہیں چا ہیئے اس نا ز ک مو قع پر اگر درست فیصلہ نہ کیاگیا اور افغانستان کو تنہا چھو ڑ ا گیا تو اس کے اچھے نتائج بر آمد نہیں ہو ں گے۔
ا س لیے یہاںضرورت اس امر کی ہے کہ دنیا بھر کے ممالک کو ا س وقت افغانستان کا بھر پو ر سا تھ دینا چا ہیئے اور وہاں قائم ہونے والی طا لبا ن کی حکومت کو مکمل سپو رٹ کر نا چا ہیئے تا کہ وہاں جاری ایک عر صے سے بد امنی کی صو ر تحال کا خاتمہ ہو سکے کیونکہ وہاں جو بد امنی کی صو رتحال ہے اس کا اثر ہمسایہ ممالک پر بھی پڑ تا ہے جو کہ یقینا اچھی با ت نہیں ہے سا بقہ افغان حکومت نے پاکستان کے ازلی دشمن ہندوستان کے سا تھ ملکر پاکستان میں تخر یب کا ری کی وا ر دا تیں کر وائیں جن کے ثبو ت وقتاً فو قتاً ملتے رہے ہیںاب افغانستان کو تنہا نہیں چھو ڑ نا چا ہیئے وہاں بننے والی طا لبا ن حکومت ہر قسم کا تعا ون کرنا ضر وری ہے تا کہ وہ کا میا ب ہو کر حکومت چلا ئے اور افغا نستان سمیت ہمسایہ مما لک اور پو رے خطے میں استحکام پید ا ہو جو یقینا سب کے لیے انتہائی نا گزیر ہے۔
امید ہے دنیا بھر کے ممالک طا لبا ن حکومت کو مستحکم کرنے میں اپنا اہم رول ادا کر یں گے جو کہ بہت ضروری ہے۔

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*