بد عنو انی کا خاتمہ اولین تر جیح

چیئر مین نیب جسٹس (ر)جا وید اقبا ل نے ایگزیکٹو بو رڈ کے اجلا س سے خطا ب کر تے ہوئے اس عز م کا اظہا ر کیا ہے کہ ملک سے بدعنو انی کا خاتمہ اور بد عنو ان عنا صر سے لوٹی گئی رقم کی وا پسی اولین تر جیح ہے نیب اور پاکستان تو سا تھ چل سکتے ہیں لیکن نیب اور کر پشن نہیں انہوں نے وا ضح کیا کہ نیب کا تعلق کسی سیا سی جما عت،گر وہ یا فر د سے نہیں بلکہ ریا ست پاکستان سے ہے نیب بزنس کمیو نٹی کی ملک کی تر قی کیلئے خد ما ت کو قد ر کی نگا ہ سے دیکھتی ہے نیب کسی دبا ﺅ اور دھمکی کی پر واہ کئے بغیر آئین اور قا نو ن کے مطا بق کام کر تا رہے گا ایسے تما م افر اد کو مشو رہ ہے کہ وہ نیب پر بلا جو از تنقید نہ کر یں اور اپنا وقت اپنے خلا ف ٹھو س شو اہد کی بنیا د پر دائر ریفر نسز کے دفا ع میں خر چ کریں قا نو ن اپنا را ستہ خو د بنائے گا۔
چیئر مین نیب جسٹس (ر)جا وید اقبا ل کا ملک سے بد عنو انی کے خاتمے اور بد عنو ان عنا صر سے لو ٹی گئی رقم کی واپسی کو اولین تر جیح دینے کا مذکو رہ بیان قا بل تعر یف ہے کیو نکہ اصل میں نیب سے عو ام کو بھی اس سلسلے میں بڑی تو قعا ت وا بستہ ہیں ان کی نظر یں اس وقت نیب پر لگی ہوئی ہیں یہی وا حد ادا رہ ہے جو ملک کی لوٹی ہوئی رقم وا پس لائے گا لیکن بعض عناصر کی جا نب سے اس ادا رے کو تنقید بنا نا کسی بھی طر ح صحیح نہیں ہے اس ادا رے پر تنقید کرنے کی بجا ئے اس کو اپنے فر اض انجام دینے کے لیے موقع دینا چا ہیئے ہم سمجھتے ہیں نیب اپنی کا رکر د گی بڑے اچھے طر یقے سے کر رہا ہے مختلف لو گو ں کے خلا ف احتسا ب عد التو ں میں ریفر نس بھی دا ئر ہیں لیکن یہ لو گ اپنے خلا ف لگائے گئے الز اما ت کا مقا بلہ کرناچا ہیئے اس پر سیخ پا ہونا ،نیب کو حکومت کا ادا رہ کہنا،یا اسے سیا سی انتقا م کہنا کسی بھی طرح ٹھیک نہیں ہے اگر کسی پرکر پشن یا بد دیا نتی کے الز اما ت ہیں تو اس کا ان کو سا منا کرنا چاہیئے یو نہی چیخنے چلا نے سے با ت نہیں بنے گی۔
جہاں تک نیب کی کا ر کر د گی کا تعلق ہے تو یہ اس وقت اچھی ہے اور مو جو دہ چیئر مین نیب اور اس کی ٹیمیں اپنے فر ائض احسن طر یقے سے انجا م دے رہی ہیں اس لیے نیب کو کسی کی پر واہ کئے بغیر اپنے کا رو ائیوں میں مزید تیز ی لانی چاہیئے اور اس سلسلے میں دائر ریفر نسز کا بھی جلد از جلد فیصلہ کرنا چا ہیئے تا کہ ان لو گوں سے لوٹی ہوئی رقم وا پس قومی خزانے میں جمع ہو اور ملک کی معا شی حا لت ٹھیک ہو سکے۔
چیئر مین نیب جسٹس (ر)جا وید اقبال نے جو اپنے مذکو رہ بیان میں نیب پر بلا جو از تنقید کرنے والوں کو بڑ ا صحیح مشورہ دیا ہے کہ وہ اپنے خلا ف دائر ریفر نسز کا دفا ع کریں یو نہی اس سلسلے میں سیا سی بیانا ت دینے سے گر یز کریں۔
ہم سمجھتے ہیں کہ ان افر اد کو اس سلسلے میں اپنے ملک کا خیال کرنا چا ہیئے اور اگر وہ اس کی دولت لوٹ کر لے گئے ہیں تو وہ فو ری طو ر پر وا پس کرنی چا ہیئے کیونکہ یہ ملک کے بہترین مفا د ات میں ہے کیو نکہ یہ ملک سب کا ہے اس لیے ا س کا خیال بھی سب کو کرنا چا ہیئے۔

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*