امریکا کاسعودی عرب کواسلحہ اورفوجی تربیت دینے پرغور

واشنگٹن (م ڈ)امریکا یمن سے ایران کی حمایت یافتہ حوثی ملیشیا کے فضائی حملوں کے ردعمل میں سعودی عرب کو دفاعی ہتھیار فروخت کرنے اور اس کی فورسز کوفوجی تربیت دینے پرغورکررہا ہے۔”وال اسٹریٹ جرنل“ نے امریکی محکمہ دفاع پینٹاگان کے حکام کے حوالے سے بتایا ہے کہ ”اس وقت سعودی عرب کو مخصوص دفاعی ہتھیار بہ شمول میزائلوں کا سراغ لگانے والے نظام کی فروخت ،سراغرسانی کے تبادلے میں اضافے،اضافی فوجی تربیت اور دونوں ملکوں کے درمیان تبادلے کے پروگراموں میں توسیع کے آپشن زیرغور ہیں۔واضح رہے کہ امریکی اخبار کی اس رپورٹ سے دوماہ قبل بائیڈن انتظامیہ نے سعودی عرب کو تین ہزار گائیڈڈ ہتھیاروں کی فروخت مزید جائزے تک منجمد کردی تھی۔یمن سے حوثی ملیشیا نے جنوری کے بعد سے سعودی عرب کے شہری علاقوں اور شہری ڈھانچے کی جانب بیلسٹک میزائلوں اوربارود سے لدے ڈرونز سے حملے تیز کررکھے ہیں۔ان فضائی حملوں میں خاص طور پر سعودی عرب کی تیل کی تنصیبات کو نشانہ بنایا جارہا ہے۔ایک امریکی عہدہ دار نے وال اسٹریٹ جرنل سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ یمن میں تنازع کے آغازکے بعد سے پہلی مرتبہ بدترین صورت حال کا سامنا ہے۔

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*