تازہ ترین

تین نئی موبائل فون کمپنیوںکی مینو فیکچرنگ یونٹ کیلئے ای ڈی بی درخواستیں جمع

لاہور( کامرس ڈیسک )ود ہولڈنگ ٹیکس میں حالیہ نرمی کے بعد تین نئی موبائل فون کمپنیوں نے مینوفیکچرنگ یونٹ قائم کرنے کے لیے تیاریاں شروع کر دی ہیں ۔حکومت نے حال ہی میں ملک میں اسملبنگ اور پیداوار کی ترغیب دینے کے لیے مقامی طور پر تیار کردہ موبائل فونز پر ڈبلیو ایچ ٹی کو ختم کرنے کا آرڈیننس جاری کیا ہے ۔رپورٹ کے مطابق ٹیکس میں چھوٹ کے بعد تقریباً 100 ڈالر کے مقامی طور پر اسمبل ہونے والے موبائل فون اور ایک امپورٹڈ موبائل کی قیمت میں تقریباً ایک ہزار 900 روپے کا فرق ہے۔تین کمپنیوں نے انجینئرنگ ڈویلپمنٹ بورڈ کوملک میں مینوفیکچرنگ یونٹس کے قیام کے لیے درخواستیں جمع کر ادی ہیں۔ملک میں جو تین یونٹ قائم کیے جارہے ہیں ان میں فیصل آباد میں ویوو موبائل، لاہور میں ایئرلنک اور کراچی میں ایڈوانس ٹیلی کام شامل ہیں۔علاوہ ازیںپاکستان موبائل فون مینو فیکچررز ایسوسی ایشن کے ڈپٹی وائس چیئرمین سردار خان نے کہا کہ مقامی سرمایہ کاروں کو ترغیب دینے کے لئے اقداما ت ستائش ہیں لیکن رکاوٹوںکودور کرنے کے لئے با اختیا رفوکل پرسن تعینات کیا جائے تاکہ اس حوالے سے مسائل اور شکایات کی جلد شنوائی ہو اورانہیں بروقت حل کیا جا سکے ۔ انہوں نے کہا کہ مقامی سطح پر نئی مینو فیکچرنگ کمپنیوں کے آنے سے نہ صرف مارکیٹ میں مقابلے کی فضا پیدا ہو گی بلکہ پاکستان کا درآمدی بل بھی کم ہوگا، ہمیں اسسریز کی تیاری کے لئے بھی پیشرفت کرنی چاہیے کیونکہ اس مد میں بہت بڑادرآمدی بل بن جاتاہے۔

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*