مزید ایک خلاف ورزی پر ٹیم کو نیوزی لینڈ سے واپس بھیج دیا جائےگا، وسیم خان

لاہور (سپورٹس ڈیسک)پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) کے چیف ایگزیکٹو وسیم خان نے 6 کھلاڑیوں کے ٹیسٹ مثبت آنے کے بعد نیوزی لینڈ میں موجود ٹیم کو خبردار کیا ہے کورونا سے متعلق گائیڈ لائنز پر عمل نہیں کیا گیا تو ٹیم کو واپس بھیج دیا جائے گا۔وسیم خان نے اپنے آڈیو پیغام میں کھلاڑیوں پر واضح کرتے ہوئے کہا کہ مجھے نیوزی لینڈ کرکٹ اور نیوزی لینڈ کی حکومت سے پیغام ملا ہے کہ 6 کھلاڑیوں کے ٹیسٹ مثبت آئے ہیں۔انہوں نے کہا کہ ان کا پیغام تھا کہ تین یا چار بار خلاف ورزیاں بھی ہوئی ہیں، کرکٹ نیوزی لینڈ کی زیرو ٹالرنس پالیسی ہے اور انہوں نے ہمیں آخری وارننگ دی ہے۔کھلاڑیوں کو مخاطب کرکے انہوں نے کہا کہ ‘میں جانتا ہوں کہ یہ مشکل وقت ہے اور آپ کےلئے آسان نہیں ہے، انگلینڈ میں بھی اسی طرح کے حالات میں کام کیا اور یہ ملک کی عزت کی بات ہے اس لیے 14 دن مکمل قرنطینہ میں کرلیں، جس کے بعد آزادی ملے گی۔انہوں نے کہا کہ اس کے بعد آپ لوگوں کو نیوزی لینڈ میں ریسٹورنٹس جانے اور باہر جانے کی آزادی ملے گی تاہم ابھی پروٹوکولز کی مکمل پیروی کریں کیونکہ وہ مجھے کہہ چکے ہیں کہ ایک اور بار خلاف ورزی ہوئی تو پوری ٹیم کو سیدھا واپس بھیج دیں گے۔پی سی بی کے چیف ایگزیکٹو کا کہنا تھا کہ یہ قومی عزت اور ملک کے احترام کی بات ہے اور اگر انہوں نے ٹیم کو نیوزی لینڈ سے واپس بھیج دیا تو بے عزتی والی بات ہوگی۔ان کا کہنا تھا کہ میں جانتا ہوں کہ آپ کے لیے مشکل ہے لیکن جو پروٹوکولز انہوں نے بتائے ہیں برائے مہربانی ان پر عمل کریں کیونکہ نیوزی لینڈ کی حکومت کے ساتھ غلطی کی کوئی گنجائش نہیں ہے۔وسیم خان نے نیوزی لینڈ کے پیغام کو دہراتے ہوئے کہا کہ یہ آخری وارنگ دے چکے ہیں، ایک اور خلاف ورزی ہوئی تو ہمیں سیدھا واپس بھیج دیں گے اور ہمارے ساتھ صحت اور سلامتی پر کوئی سمجھوتہ نہیں کریں گے۔

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*