کسی سے ذاتی دشمنی نہیں ، حکومت کو دسمبر نصیب نہیں ہو گا،فضل الرحمان

لاہور (آئی این پی ) اپوزیشن جماعتوں کے اتحاد پاکستان ڈیموکریٹک مومنٹ(پی ڈی ایم )کے سربراہ مولانا فضل الرحمان نے کہا ہے اب حکمران ہم سے این آراو مانگ رہے ہیں لیکن ہم انہیں این آر او نہیں دے رہے،کسی سے ذاتی دشمنی نہیں ہے، موجودہ پارلیمنٹ عالمی اسٹیبلشمنٹ کی سازشوں سے آئی ہے ، اس کی وجہ سے عوام معاشی مشکلات کا شکار ہیں، موجودہ حالات سے اندازہ لگایا جا سکتا ہے کہ حکومت کو دسمبر نصیب نہیں ہو گا۔ جمعہ کو جمعیت علماءاسلام (ف) کے سربراہ مولانا فضل الرحمان نے لاہور جامعہ اشرافیہ میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ملک میں اس وقت صورتحال یہ ہے کہ آئین کی حکمرانی نہیں ہے اور جعلی حکومت کی زندگی گزار رہا ہے،عام آدمی نا اہلی کی وجہ سے شدت کرب میں مبتلا ہے جبکہ ملک معاشی مشکلات کا شکار ہے اور غریب آدمی مہنگائی میں جواب دے چکا ہے۔ انہوں نے کہا کہ اپوزیشن جماعتوں کی حکومت کے خلاف تحریک گوجرانوالہ سے آغاز ہے جو حکمرانوں کی کشتی کو زرکاب کرنے کےلئے سنگ میل ہو گا۔ فضل الرحمان نے کہا کہ ہماری کسی سے ذاتی دشمنی نہیں ہے لیکن یہ محسوس ہونا چاہیے کہ پاکستان پاکستانیوں کا ہے، یہ ملک مغربی آقاﺅں کا نہیں ہے، پاکستان عالمی اسٹیبلشمنٹ کےلئے معرض وجود میں نہیں آیا ہے کیونکہ دنیا میں سازشیں ہوتی ہیں اور اپنی مرضی و ایجنڈا کے لوگ مسلط کئے جاتے ہیں جس کی واضح مثال ہمارے ملک میں موجودہ حکومت کی جانب سے ایف اے ٹی ایف کے قوانین کا پاس کرنا ہے۔ فضل الرحمان نے کہا کہ موجودہ پارلیمنٹ معتبر نہیں ہے، عالمی سازش کے نتیجے میں لائی گئی ہے اور اس طرح کی حکمرانی کا خاتمہ کرنے کےلئے ساری جماعتیں گوجرانوالہ میں اکٹھی ہوئی ہیں۔ صحافی کے سوال پر کہا کہ آج ساری اپوزیشن ساتھ ہے، دیر آئے پر درست آئے ہیں،اب حالات تبدیل ہو چکے ہیں، حکومت ہم سے این آر او چاہتی ہے لیکن ہم نہیں دے رہے ہیں اور دسمبر تک یہ حکومت گھر چلی جائے گی۔ انہوں نے کہا کہ حکومت کا اعلامیہ پر اعتماد ہے، اب ملک میں ان ہاﺅس تبدیلی نہیں عام انتخابات ہی حل ہیں۔ فضل الرحمان نے کہا کہ عہدوں کےلئے پی ڈی ایم میں نہیں ہیں ہم ایک مقصد کےلئے اکٹھے ہوئے ہیں۔

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*