مہنگائی کیخلا ف وزیر اعظم کا ایکشن پلا ن تیا ر

وزیر اعظم عمر ان خان نے مہنگائی کیخلا ف ایکشن پلا ن تیا ر کر لیا ہے اس طرح اشیا ءضرور یہ کی قیمتو ں میں کمی کیلئے فیصلو ں پر عمل در آمد شر وع ہونے کی با ت کی جا رہی ہے پلا ن کے تحت حکومتی ادا رو ں اور ریا ستی وسائل کے بھر پو ر استعما ل کا فیصلہ کیا گیا ہے اس ضمن میں ٹا ئیگر فو ر س بھی استعما ل ہو گی اس طرح وزیر اعظم عمر ان خان نے ایک با ر پھر ٹا ئیگر فو ر س کو
مید ان میں اتا رنے کا فیصلہ کیا ہے ٹا ئیگر فو ر س کو ذخیر ہ اند وز و ں کی نشا ند ہی کا ٹا سک سو نپے جانے کا امکا ن ہے اس سلسلے میں معا ون خصو صی یو تھ افیئرز عثما ن ڈا ر سے مشا ور ت مکمل ہو گئی ہے انہو ں نے ٹا ئیگر فو ر س کا بڑ ا کنو نشن بلا نے کی ہد ایت کر دی جو اگلے ہفتے اسلا م آبا د میں ہو گا جس میں ٹا ئیگر فو ر س کے جو ان شر یک ہو ں گے ۔
ملک میں بڑ ھتی ہو ئی مہنگائی کیخلا ف وزیر اعظم عمر ان خان کا ایکشن پلا ن تیا ر کر کے اس پر مکمل در آمد کرانے کے لیے ٹا ئیگر فو ر س کو ذمہ دا ری سو نپا ایک اچھا اقد ام تو ضرور ہے لیکن یہا ں یہ سو ال ابھر تا ہے کہ آخر وز یر اعظم عمر ان خان نے یہ ذمہ دا ری ایک تنظیم کو کیو ں کر دی کیا اس پر کنٹر ول کرنے کے لیے حکومتی ادا رے نہیں ہیں ؟جس میں با قا عد ہ سر کا ری ملا زمین اور
افسر ان ہیں جن کا کا م ہی قیمتو ں پر چیک اینڈ بیلنس رکھتے ہوئے نہ صر ف اسے کنٹر ول کر ناہے بلکہ اس کی خلا ف ورز ی کرنے پر ان کو جر ما نے اور سز ائیں بھی دیناہے لیکن افسو س کی با ت یہ ہے کہ یہ کا م ایک سیا سی تنظیم کو سو نپی گئی جو ایک سیا سی پا رٹی کے ما تحت ہے۔
یہا ں ایک اور با ت بھی قا بل غو ر ہے کہ آخر ملک میں مہنگائی کو ن کر ا تا ہے اس کا ذمہ دا ر کو ن ہے ؟سب سے پہلے اس کا تعین کرنے کی ضرور ت ہے اس کے بعد اس کو کنٹر ول کرنے کی با ت ہو نی چا ہیئے ۔
اس میں کوئی شک نہیں کہ مو جو دہ حکومت کے بر سر اقتدا ر آتے ہی ملک میں مہنگائی میں کئی گنا اضا فہ ہو ا ہے بلکہ یہ بڑی تیز رفتا ری سے مز ید بڑ ھ رہی ہے اس کو لگا م دینے والا کوئی نہیں حا لا نکہ وزیر اعظم عمر ان خان نے ملک میں بڑ ھتی ہو ئی مہنگائی کا متعدد با ر نو ٹس لیا ہے لیکن ایسا لگتا ہے کہ متعلقہ ادا رے ان نو ٹسو ں پر عمل در آمد نہیں کر رہے انہو ں نے اس اہم معا ملے کو سنجید ہ ہی نہیں لیاجو کہ قا بل مذمت اقد ام ہے۔
ایک عا م آدمی تو ملک میں بڑ ھتی ہوئی مہنگائی کا ذمہ دا ر حکومت کو قر ار دیتا ہے لیکن اس سلسلے میں وزیر اعظم عمر ان خان بیا ن جا ری کر تے ہیں یا اس کا نو ٹس لینے کی با ت کر تے ہیں تو اس آدمی کے ذہن میں ایک اہم سو ال ابھر تا ہے کہ آ خر یہ مہنگا ئی کو نسی قو ت کر رہی ہے جو وزیر اعظم عمر ان خان کے نو ٹس کو بھی کچھ نہیں
کر تی۔
اس لیے یہا ں ضرورت اس امر کی ہے کہ وزیر اعظم عمر ان خان کو اس سلسلے میں ایک پا ر ٹی کی ذیلی تنظیم کو ذمہ دا ریا ں سو نپے کی بجا ئے متعلقہ ادا رے جو اس مقصد کے لیے بنا ئے گئے ہیں کو نہ صر ف یہ کا م کرنے کی سختی سے ہد ایا ت دینی چا ہئیں بلکہ اس میں سستی کرنے والے عنا صر کیخلا ف سخت کا رو ائی کرنے کے احکاما ت جاری کرنے چا ہئیں تا کہ مہنگائی کی تیز رفتا ری کو رو کا جا سکے کیو نکہ اگر ایسا نہ ہو ا تو پھر ملک میں غر یب عو ام کے گھر و ں میں فا قو ں کا را ج ہونے کا
خطر ہ ہے جو کہ با لکل بھی اچھا اقد ام نہیں اس کی رو ک تھا م کرنی چا ہیئے۔

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*