نو جو انوں کونو کر یو ں کی فر اہمی اولین تر جیح

وزیر اعظم عمر ان خان نے ایک با ر پھر اسعز م کا اظہا ر کیا ہے کہ نو جو انوں کو نو کر یو ں کے مو اقع فر اہم کرنا اولین تر جیح ہے تما م وفا قی محکمے اور صوبائی حکومتیں ایس ایم ای سیکٹر کے فر و غ پر خصو صی تو جہ دیں کا رو با ر میں آسا نیا ں پیدا کرنا ،غیر ضرور ی ریگو یشنز کاخا تمہ ،ٹیکس کے نظا م میں بہتر ی اور صنعتی عمل سے وا بستہ کا رو با ری بر ا در ی کے لیے ہر ممکنہ سہو لت فر اہم کرنا حکومت کی او لین تر جیح ہے وزیر اعظم عمر ان خان نے کر اچی میں معر و ف صنعت کا رو ں اور کا رو با ری تنظیمو ں کے نما ئند و ں سے گفتگو کر تے ہوئے اس عز م کا بھی اظہا ر کیا کہ کا رو با ری بر ادری سے ملا قا توں کا سلسلہ جا ری رہے گا اس لیے اصلا حا تی و سہو لت کا ری کے عمل کو مز ید آگے بڑ ھانے کی ضرورت ہے۔
نو جو انوں کو نو کر یو ں کی فر اہمی کو اولین تر جیح دینا بلا شبہ وفا قی حکومت اور وزیر اعظم عمر ان خان کا مذکو رہ بیان قا بل تعر یف تو ضرور ہے لیکن اب تک حکومت اس قسم کے کئی وعد ے پہلے بھی کر چکی ہے بلکہ اقتدا ر میں آنے کے بعد وزیر اعظم عمر ان خان نے ایک کر و ڑ نو کر یا ں دینے کا ایک بڑ ا وعد ہ بھی کیا تھا مگر افسو س کی
با ت یہ ہے کہ دوسا ل سے زا ئد کا عر صہ گز رنے کےبا و جو د حکومت اس کو پو ر ا کرنے میں نا کا م ہو گئی ہے جبکہ دوسر ی جا نب ملک بھر میں بے رو ز گا ر ی اپنے عر و ج پر ہے صر ف یہ ہی نہیں ہو ا بلکہ ملک میں مہنگائی میں بھی کئی گنا اضا فہ ہو ا ہے اور نہلے پر دھلا یہ ہے کہ اس سا ل حکومت نے وفا قی بجٹ میں ملا زمین کی تنخو ا ہو ں میںکسی بھی قسم کا کوئی اضا فہ نہیں کیا جو کہ ملک کی تا ریخ میں شا ہد پہلی مرتبہ ہو ا ہے اس سے قبل جتنی بھی حکومتیں آئی ہیں حا لا ت جیسے بھی ہو ئے ہیں انہوں نے سر کا ریملا زمین کی تنخو اہو ں اور پنشن میں اضا فہ کیا ہے مگر مو جو دہ حکومت نے ایسا نہ کر کے سر کا ری ملا زمین کو بہت زیا دہ ما یو س کیا ہے جہا ں تک کا رو با ری اصلا حا تی اور سہو لت کا ری کے عمل کو مز ید آگے بڑ ھانے کی ضرورت کا تعلق ہے تو اس سلسلے میں وفا قی حکومت کو احسن اقد اما ت کرنے پڑ یں گے کیو نکہ حکومت نے اس سلسلے میں ٹیکسز کا نفا ذ کیا ہے جس کے باعث مہنگائی میں اضا فہ ہو ا ہے کیو نکہ کا روبا ری حضر ات پر جو ٹیکسز حکومت نے لا گو کر تی ہے اس سے بر اہ را ست عو ام ہی متا ثر ہو تے ہیں ہم حکومت کی جا نب سے ایسے ٹیکسو ں کے نفا ذ کے خلا ف نہیں ہیںلیکن حکومت اور متعلقہ ادا رو ں کو تا جر و ں پر بھی چیک اینڈ بیلنس رکھنے کی ضرورت ہے تا کہ وہ عو ام سے زیا د تی نہ کر سکیں۔یہا ں ضرورت اس امر کی ہے کہ وفا قی حکومت نو جو انوں سے کئے گئے وعدو ں کو عملی جا مہ پہنا ئے اور ان کو نو کر یا ں فر اہم کرے اس سلسلے میں اس کوصو بائی حکومتوں کو بھی بے رو ز گا ر نو جو انوں کو نو کر یا ں
فر اہم کرنے کی ہد ایا ت دینی چا ہئیں کیو نکہ بڑ ھتیہو ئے بے رو ز گا ری کے باعث نو جوان ما یو سی کا شکا ر ہو کر منفی سر گر میو ں میں مبتلا ہو رہے ہیں وہ خو د کشی کرنے پر بھی مجبو ر ہیں جن کا تد ارک کرنا چا ہیئے۔

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*