جلسے جلوس اپوزیشن کا حق مگر اداروں کےخلاف ہرزہ سرائی نہیں کرنے دینگے ، وزیردفاع

پشاور (آئی این پی )وزیردفاع پرویز خٹک نے کہا ہے کہ تحریک چلانا جلسے جلوس کرنا اپوزیشن کا حق ہے مگر اداروں کے خلاف ہرزہ سرائی ملک کو غیر مستحکم کرنے اور قانون ہاتھ میں لینے کی اجازت کسی کو نہیں دیں گے ،پاکستان ڈیموکریٹک مومنٹ ملک اور قوم کی بہتری کے لیے کوئی تجاویز لائے ،میں نہ مانو ںکی پالیسی نہیں چلے گی ،متحدہ اپوزیشن کی تحریک شروع ہونے سے پہلے کئی مسائل سے دوچار ہے، عوام ان کا ساتھ نہیں دیں گے، باشعور عوام عمران خان اور پی ٹی آئی کے ساتھ ہیں، وزیراعظم عمران خان غریب عوام کے لیے امید کی کرن ہے اور پوری قوم وزیراعظم عمران خان کی طرف دیکھ رہی ہے پی ڈی ایم موجودہ حکومت پر ایک پائی کی کرپشن ثابت نہیں کرسکی نہ ہی ان کے بیانیے میں کوئی حقیقت ہے ،دو سالوں تک انتخابات کے خلاف دھاندلی کے الزامات ثاب نہیں کرسکے، الیکشن ٹریبونل نے بیشتر مقدمات نمٹا دیئے ہیں، پاک فوج جو دنیا کی مانی ہوئی فوج ہے انہوں نے دہشتگردی کے خلاف جنگ جیتی ہے پاک فوج کی قربانیوں کا اعتراف امریکہ برطانیہ اور روس چین سمیت پوری دنیا کررہی ہے بھارت جو پاکستان کو غیر مستحکم کرنے کے خلاف اپنا ایجنڈا چلارہا ہے اس لیے پی ڈی ایم کی قیادت کو چاہیے کہ وہ بھارتی ایجنڈے کی بجائے پاکستان کے ایجنڈے پر چلے تو پھر ہمیں کوئی اعتراض نہیں۔ وہ جمعہ کو امانگڑھ،ڈھیری کٹی خیل اور خٹک کالونی میں جلسوں سے خطاب کررہے تھے اس موقع پر اے این پی تپہ امانگڑھ کے سابق صدر اور سابق ویلج ناظم راج محمد خان اور اس کے پورے خاندان اور ساتھیوں جبکہ ڈھیری کٹی خیل میں پاکستان پیپلز پارٹی کے سابق امیدوار صوبائی حلقہ شمس الرحمان عرف شمس ان خاندان اور ان کے ساتھیوں کی پی ٹی ائی میں شمولیت اور پرفضل چرچ میں عیسائی برادری کی پی ٹی ائی میں شمولیت کی اس موقع پرا وزیر دفاع پرویز خٹک نے نئے شامل ہونے والوں کو پارٹی کی ٹوپیاں پہنائی اور ان کا خیر مقدم کیا اور کہا کہ پی ٹی ائی میں ان کو پوری عزت ملے گی اس موقع پر قومی اسمبلی مجلس قائمہ برائے توانائی و قدرتی وسائل کے چیرمین ڈاکٹر عمران خٹک حلقہ پی کے 63 کے نامزد امیدوار میاں عمر کاکا خیل، سابق ضلعی کونسلر اسحاق خان خٹک، ملک افتاب خان، سابق ناظم راج محمد، شمس الرحمان شمس اور دیگر نے خطاب کیا پرویز خٹک نے کہا کہ سابق وزیر اعظم نوازشریف جوخود فوج کی نرسری میں پلے بڑے عجیب بات یہ ہے کہ اب اقتدار سے باہر رہ وہ اپنی یاداشت کو بیٹھے ہیں نوازشریف کا اصل چہرہ عوام کے سامنے ہیں انہوں نے ہمیشہ جو کچھ کیا جہاں سے تربیت پائی انہی کے خلاف ہرزہ سرائی کررہا ہے وہ شاید بھول گئے ہے کے سپریم کورٹ نے ساری عمر کے لیے نااہل قرار دیا ہے عدالتوں نے اس کو اشتہار ی قرار دیا ہے اس میں وزیر اعظم عمران خان اور پی ٹی آئی کا کیا گناہ ہے پی ڈی ایم سے حکومت کو کوئی خطرہ نہیں حکومت اپنی اائینی مدت پوری کریں گی پی ڈی ایم اپنی تحریک چلائے جلسے جلوس کریں قانون ہاتھ میں نہ لیں پاکستان پہلے ہی کئی مسائل سے دوچار ہیں پی ڈی ایم کے جلسوں میں پاکستان کو غیر مستحکم کرنے اور پاک فوج جو دنیا کی مانی ہوئی فوج ہے انہوں نے دہشتگردی کے خلاف جنگ جیتی ہے پاک فوج کی قربانیوں کا اعتراف امریکہ برطانیہ اور روس چین سمیت پوری دنیا کررہی ہے بھارت جو پاکستان کو غیر مستحکم کرنے کے خلاف اپنا ایجنڈا چلارہا ہے اس لیے پی ڈی ایم کی قیادت کو چاہیے کہ وہ بھارتی ایجنڈے کی بجائے پاکستان کے ایجنڈے پر چلے تو پھر ہمیں کوئی اعتراض نہیں ،عوام کو اکھٹا کرنا، عوام کو سڑکیں پر لانے اور دھرنے کی سیاست لوگ پی ٹی ائی سے سیکھیں ہمیں ان باتوں سے نا ڈرائیں اور نہی استعفوں سے ڈرتے ہیں اپوزیشن والے استعفے دیں ہم ضمنی الیکشن کروادیں گے عوامی پی ڈی ایم کے ساتھ نہیں ان کے جلسے شادی ھالوں اور بند کمروں میں ہورہے ہیں یہ لوگ ہمارا کیا مقابلہ کرسکیں گے انہوں نے کہا کہ اے این پی، پی پی پی اور پی ایم ایل این نے اس ملک کو جو نقصان دیا معیشت تباہ حال کی کرپشن کے زریعے اپنی تجوریاں بھری یہ ان کی سیاست ہے قوم ان کو ابھی تک بھولی نہیں عمران خان واحد لیڈ ر ہے جنہوں نے اٹا، چینی گندم بحرانوں اور مصنوعی مہنگائی پیدا کرنے والوں کے خلا ف اقدامات اٹھائیں اور ان کو منطقی انجام تک پہنچایا پارٹی میں خوداحتسابی کا عمل جاری ہے وزیر اعظم عمران خان نے صرف کرپشن کے الزامات اور غیر تسلی بحش کارکردگی پر کئی وزرا اور معاونین کی چھٹی کرادی انہوں نے کہاکہ مہنگائی بے روزگاری ضرور ہے لیکن یہ سابقہ حکمرانوں کی غلطی معاشی پالیسیوں بجلی کی مہنگی معاہدوں ار ایل این جی گیس کی مہنگی معاہدوں 30 ہزار ارب روپے کے قرضوں کی بدولت اج قوم کو یہ دن دیکھنے پڑ رہے ہیں رہی سہی کثر کورونا نے پوری کرلی لیکن ان تمام حالت کے باوجود عمران خان نے بہتر پالیسیوں کی بدولت بڑی حد تک کافی مسائل پر قابوپالیا ہے پرویز خٹک نے کہا کہ قوم کھرے اور کھوٹے کی تمیز کرسکتے ہیں اللہ کے فضل وکرم سے ہم پر کوئی ایک پائی چوری ثابت نہیں کرسکتا وزیر اعظم عمران خان نے کرپشن کے خلاف جہاد کا اعلان کیا ہے اور وہ کسی کو این ار او نہیں دیں گے مولانا فضل الرحمان جو اپنی سیٹ جیت نہ کرسکے وہ پی ڈی ایم کی سربراہی میں کیا تیر ماریں گے اس ملک کے ساتھ اب یہ کھلواڑ بند ہونا چاہیے مولانا فضل الرحمان نوازشریف، اصف علی زرداری،اور بلاول بھٹو کو بچانے کے لیے میدان میں اترے ہیں انہوں نے کہا کہ نوشہرہ کے عوام کا مشکور ہوں جنہوں نے ہمیشہ اعتماد کیا انہوں نے کہا کہ عمرکا کا خیل ایک نوجوان قیادت ہے پی پی پی، اے این پی سے جوک درجوق کارکنوں کا پی ٹی ائی میں شامل ہونا عمران خان، پی ٹی اور میری قیاد پر اعتماد کا مظہرہے انہوں نے کہا عمرکا کا خیل بھاری اکثریت سے الیکشن جیتیں گے انہوں نے کہا کہ جاری ترقیاتی منصوبے پورے ہیں نوشہرہ کو سیلاب سے بچالیا گیا دریاے کابل کے پشتوں پر تیرہ ارب روپے خرچ ہورہے ہیں ائیر یونیورسٹی پر تیز ی سے کام شروع ہوچکا ہے ٹیکنیکل یونیورسٹی، نوشہرہ میڈیکل کالج اورقاضی میڈیکل کمپلیکس تکمیل کے آخر مراحل میں ہیں زرعی یونیورسٹی پر بہت جلد کام شروع ہوگا نوشہرہ بجلی اور گیس گھر گھر پہنچائیں گے نوشہرہ کلاں گیس پریشر کا مسئلہ بہت جلد حل ہوگا عوام کے بنیادی مسائل ان کی مشاور ت سے حل کررہیں۔

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*