تازہ ترین

بڑھتی عمر کے اثرات ،چند راز

٭٭گذشتہ سے پیوستہ٭٭
گوبھی۔پاکستان میں گوبھی اور پھول گوبھی رغبت سے کھائی جاتی ہیں جبکہ بیرون ملک اس سبزی کی ایک قسم سرخی ما ئل جامنی بھی دستیاب ہوتی ہے۔ یہ جس شکل اور رنگ کی ملے ضرور کھانی چاہئے کیونکہ اس میں وٹامن A،C،Eاور کیلشیئم پائے جاتے ہیں۔
چقندر۔اس سبزی میں ایک کلر پگمنٹBetacyaninبے حد طاقتور اینٹی آکسیڈنٹ موجود ہے۔
اس کے علاوہ وٹامنA،B6،Cفولک ایسڈ اور فائبر موجود ہیں جو ڈینمشیا سے محفوظ رکھنے کی صلاحیت رکھتے ہیں۔
شکر قند۔یہ جلد کے لئے سپر فوڈ ہے اس کے علاوہ اس میں پوٹا شیئم ،وٹامن C، کیلشیئم اور فولک ایسڈ بھی موجود ہے۔گاجر کی طرح اس میں بھی بیٹا کیروٹین موجود ہے۔
بیک کئے ہوئے آلو۔اگر آپ وزن کی زیادتی کا شکار ہیں تو آلو کھا سکتے ہیں ورنہ اس کا کدوکش کر کے ماسک اور کلینزنگ جیسے مقاصد پورے کر سکتے ہیں۔
یہ ہر انداز سے کولاجن اور ایلاسٹن کو توانائی بہم پہنچانے والی سبزی ہے۔
سرخ مرچیں۔ایک لمبی سرخ مرچ میں Luteinکی10ملی گرام تک مقدار موجود ہوتی ہیں ،یہ قوی تر آکسیڈنٹ ہے جو آنکھوں اور جلد کو دھوپ کی مضر شعاعوں سے محفوظ رکھتاہے۔
کیلا۔اس پھل میں فائبر ،پوٹاشیئم،وٹامن B6کے ساتھ ساتھ اینٹی آکسیڈنٹس بھی موجود ہیں۔
سبز چائے۔اس چائے میں سیاہ کی طرح Catechinsکے ساتھ پولی فینولز اور اینٹی آکسیڈنٹس کی مقدار جہاں توانائی بہم پہنچاتی ہے وہیں حرارے جلانے اور وزن متوازن رکھنے میں بھی معاونت کرتی ہے۔اس چائے کی ایک اہم خاصیت یہ ہے کہ یہ دماغ میں Dopamineکی سطح میں اضافہ کرتی ہے اس طرح ہمارے ارتکاز توجہ میں بہتری آتی ہے۔موسم کوئی بھی ہو اگر دودھ والی چائے کی کچھ مقدار کم کرکے روزانہ ایک کپ سبز چائے پی لی جائے تو تندرستی اور حسن دونوں بر قرار رہتے ہیں۔
ڈارک چاکلیٹ۔ اس چاکلیٹ میں دو مفید اجزائ TyramineاورPhenylethylamineموجود ہیں جو توانائی بڑھاتے ہیں۔آپ اگر ورزش کرنے سے پہلے ایک درمیانے سائز کی ڈارک چاکلیٹ کھالیتے ہیں تو فعال رہ کر ورزش کا دورانیہ مکمل کر لیتے ہیں۔اس دوران توانائی بحال رہتی ہے۔
زیتون کا آئل۔سلاد کھانے کی عادت ڈالنے اور اس سلاد پر اولیو آئل کی ڈریسنگ بھی کیجئے۔
یہ تیل بواسیر،جلدی امراض ،سوزش،پھوڑے پھنسیوں ،منہ کے چھالوں ،پتے کی پتھری ،دمہ ،نزلہ زکام اور عرق النساءجیسے امراض سے چھٹکارے کے لئے بھی مفید ہے۔اولیو آئل Virgineہوتو زیادہ بہترہے۔یہ کوکنگ کے لئے مفید نہیں البتہ یہ درج بالا بیماریوں میں نہایت اکسیر ہے اور اسے ایک چائے کے چمچے کے برابر پینے سے فائدہ ہوتاہے۔
سٹرس فروٹس یا لیمونی پھل۔سنترے،مالٹے،چکوترے اور KiwiوٹامنCسے بھر پور پھل ہیں اسی طرح سبزیوں میں بروکولی مفید ترین سبزی ہے یہ سپر فوڈز ہیں اور متعدد جسمانی عارضوں کی مدافعت کرتے ہیں۔
وٹامن Cاستعمال نہ کرنے والے عارضہ قلب میں بھی مبتلا ہو سکتے ہیں۔یہ خیال رہے کہ فری ریڈیکلز کے نقصانات سے بچنے کے لئے تازہ سبزیوں اور پھلوں کا استعمال نا گزیر ہے۔اگر غذائی احتیاط کے بعد بھی جلدی امراض لاحق ہوں تو ڈاکٹر سے مشورہ کرنا ضروری ہے ممکن ہے کہ وہ ادویات تجویز کرے۔

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*