ایوان با لا اور مختلف کمیٹیو ں کی بلوچستا ن کیلئے آواز

چیئر مین سینیٹ محمد صادق سنجرانی نے گذشتہ روز کوئٹہ چیمبر آٓ ف کا مرس اینڈ انڈ سٹر ی کے وفد سے با ت چیت کرتے ہوئے وا ضح کیا ہے کہ ایوان با لا اور مختلف کمیٹیو ں نے ہمیشہ بلوچستا ن کیلئے آواز اٹھا ئی ہے بلوچستا ن میں کا روبا ری سر گر میو ں کو فر وغ دینے کیلئے جا مع اور قا بل عمل پا لیسیاں بنا نے کی ضرورت ہے تا کہ بلوچستا ن کے تا جر طبقے کی شکا یا ت کا ازالہ کیاجا سکے آئند ہ بھی مو ثر انداز میں آواز اٹھا تے رہیں گے۔
ایوان بالا اور مختلف کمیٹیو ں کا بلوچستا ن کیلئے آواز اٹھا نا بلاشبہ ایک قا بل تعر یف اقدام ہے اس کا کر یڈٹ چیئر مین سینیٹ محمد صادق سنجرانی کے سر جا تا ہے کیونکہ انہو ں نے مذکورہ اقدام کر کے بلوچستانی ہونے کا حق ادا کر دیا ہے چیئر مین سینیٹ محمد صادق سنجرانی صوبے کے حقو ق اور ا س کے مسا ئل حل کرنے کیلئے کلید ی کردار ادا کر رہے ہیں کیونکہ بلوچستان جو ملک کا رقبہ کے لحا ظ سے سب سے بڑا اور معد نی دولت سے ما لا ما ل ہے لیکن اس کے با وجود سا بقہ حکومتوں نے اس کی جانب کوئی خصوصی تو جہ نہیں دی صر ف بیانات اور یقین دہانیوں سے کام لیا گیا اور اس طرح یہ صوبہ پسما ند گی کا شکا ر رہا۔
اب چیئر مین سینیٹ کے عہد ے پر بلوچستا ن سے تعلق رکھنے والی اہم شخصیت محمد صادق سنجرانی کی تعیناتی اس صوبے کی قسمت بد ل سکتی ہے کیونکہ یہ ملک کا ایک اہم اور بہت بڑا عہد ہ ہے اس کے سا تھ سا تھ یہ با ت بھی حقیقت پر مبنی ہے کہ چیئر مین سینیٹ محمد صا دق سنجرانی صوبے کی تر قی کیلئے کو شا ں ہیں۔
جہا ںتک بلوچستا ن میں کا رو با ری سر گر میو ں کے فر و غ اور قا بل عمل پا لیسیا ں بنا نے کی با ت ہے تو اس سلسلے میں احسن اقدامات کرنے کی اشد ضرورت ہے کیونکہ بلوچستا ن کی تر قی کیلئے یہا ں کا رو بار اور سر ما یہ کاری کرنا انتہا ئی نا گز یر ہے اس کے نہ ہونے سے صوبے میں ایک طر ف پسما ند گی اور دوسر ی جا نب بہت زیا دہ بے روز گاری ہے کیونکہ تما م بے روز گا ر نو جو انوں کا دا ر و مد ار سر کا ری ملا ز متو ں پر ہی ہے جو کم ہونے اور بے روز گا ر ی کی تعداد زیا دہ ہونے کی وجہ سے مسئلے کا با عث ہے اگر یہا ں کا رو با ر کو وسعت دی جا ئے اس کے لیے سر ما یہ کا ری اور حکومت تا جر وں کی شکا یا ت کا ازالہ کر ے تو اس کے مثبت نتا ئج بر آمد ہو سکتے ہیں اس سے صوبے میں کا رو با ر کو وسعت دی جا سکے گی جو کہ صوبے اور یہاں کے بے رو ز گا ر نو جو انوں کے لیے بہت ہی ضروری ہے۔
یہ با ت خو ش آئند ہے کہ بلوچستان کو ملک کے دیگر تر قیا تی صوبوں کے بر ابر لانے کیلئے چیئر مین سینیٹ محمد صا دق سنجرانی اور وزیر اعلیٰ بلوچستان جا م کما ل خان سنجید ہ اقدامات کر رہے ہیں ا ن کو اس سلسلے میںوفا قی حکومت سے بھی مر ا عا ت لینی چا ہئیں کیونکہ وزیر اعظم عمر ان خان نے انتخا با ت سے پہلے اور بعد میں بھی بلوچستا ن کو تر قی دینے کے وعد ے اور دعو ے کئے ہیں اس طرح پاکستا ن تحر یک انصاف بھی اتحا دی جما عت ہے اس طر ح سب کو مل کر اقدامات کرنے چا ہئیں اگر وہ سب مشتر کہ طو رپر ایسا کریں تو صوبہ تر قی کی منا زل طے کر سکتا ہے اور یہ بلا شبہ ایک تا ر یخی اقدام ہو گا۔

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*