میرے والد نے مجھے زندگی میں کبھی بھی گلوکار تسلیم نہیں کیا ‘عطاءاللہ عیسیٰ خیلوی

Attaullah esakhelvi

لاہور(شوبز ڈیسک) معروف گلوکار عطاءاللہ عےسیٰ خےلوی نے کہاکہ جب مےں نے گائےکی کا آغاز کےا تو مےر ی سب سے بڑی خواہش تھی کہ مےرے پاس مےرا اپنا ہار مونےےم ہو ، تو اس وقت مےرے پاس پےسے نہےں ہوتے تھے اس وقت مےری والدہ نے مجھے سپورٹ کےا اور آج مےں جس مقام پر ہوں اس مےں مےری والدہ کا سب سے بڑا رول ہے ۔اےک انٹروےو کے دوران انہوںنے کہاکہ مےرے والد سخت گےر تھے اور رواےتی پٹھا ن تھے اورانہوںنے مجھے کبھی بھی گلوکار تسلےم نہےں کےا جس کا مجھے بہت دکھ ہوا کرتا تھا ۔ انہوںنے کہاکہ مےری والدہ مجھے کہا کرتی تھےں کہ تم دل چھوٹا نہ کرو تمہارے والد تمہار گانا چھپ چھپ کر سنتے ہےں مگر تمہارے سامنے اس کا اظہار نہےں کرتے کہ وہ تمہاری گائےکی سے متاثر ہےں انہوںنے کہاکہ وہ رواےتی پٹھان تھے اورانہوںنے اپنے خاندان کی رواےتوں کا نبھا ےا اور اسی وجہ سے مجھے ان کی مخالفت کا سامنا کرنا پڑا ۔انہوںنے کہاکہ گائےکی کی دنےا مےں اپنا مقام اور پہچان بنانے کے لئے مےں نے بڑی محنت کی ہے اورا س کے پےچھے اےک طوےل جدوجہد شامل ہے کہ مےں نے چھوٹے کام اور ملازمتےں کےں اور پھر خدا کی ذات نے مجھے عزت اورشہرت سے نوزا اور مےں اسکا کا جتنا بھی شکر ادا کروں کم ہے کہ نہ صرف پاکستان بلکہ پوری دنےا مےں مےرا نام ہے اوریہ صرف پاکستان کی بدولت ہے ۔

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*