سرداراختر مینگل اورقاسم سوری کی وفاقی وزیر توانائی و بجلی سے ملاقات

اسلام آباد +کوئٹہ(این این آئی)بلوچستان نیشنل پارٹی کے مرکزی صدر سردار اختر جان مینگل ،ڈپٹی اسپیکر قومی اسمبلی قاسم خان سوری،ارکان صوبائی اسمبلی ملک نصیرشاہوانی ،ثناءبلوچ نے وفاقی وزیر توانائی و بجلی عمر ا یوب سے اسلام آباد میں ملاقات کی ملاقات کے دوران بلوچستان کو درپیش بجلی کے مسائل پر تفصیلی بات چیت کی گئی۔ وفد نے وفاقی وزیر کو بلوچستان کے زمینداروں کو درپیش مسائل ،بجلی کی لوڈشیڈنگ ،گرڈز اور ٹرانسمیشن لائنوں کی بلوچستان بھر میں خستہ صورتحال ،سی پیک کی بجلی سے بلوچستان کی محرومی جیسے اہم پہلووں پر بات چیت کی اور 2019-20ءکی پی ایس ڈی پی کیلئے اہم منصوبے شروع کرنے کا مطالبہ کیا ۔وفد نے کوئٹہ ،خضدار،خاران ،رخشاں ڈویژن ، مکران ڈویژن ،نصیرآباد ڈویژن اور ژوب ڈویژن سمیت تمام علاقوں میں زمینداروں و گھریلو صارفین کے ساتھ طویل لوڈشیڈنگ کی صورت میں ہونے والی زیادتی سے وفاقی وزیر ،وفاقی سیکرٹری اور این ٹی ڈی سی کے ایم ڈی کو آگاہ کیا اوراسکی بہتری کیلئے مفصل تجاویز دیں جن میں مکران میں گرڈ اسٹیشن اور ٹرانسمیشن لائن ،نوکنڈی ،ماشکیل ،خاران اور خضدار میں نئے گرڈ اسٹیشن اور اوور لوڈ فیڈرز کے مسائل کو فی الفور حل کرنے ،صارفین کو ٹرانسفارمرز کی فراہمی کا مطالبہ کیا۔ وفاقی وزیر نے سردار اختر جان مینگل اور وفد کو یقین دلایا کہ وہ کیسکو کے چیف ایگزیکٹو کو بلاکر ان تمام امور پر اہم فیصلے کریں گے اور بلوچستان کے تمام مسائل کو جلد از جلد حل کرنے اور پی ایس ڈی پی میں منصوبوں کی شمولیت کیلئے ایک اہم اجلاس اگلے ہفتے طلب کیا جائے گا

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*