بلوچستان کی پسماندگی اور غربت کے ذمہ دار

وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال خان نے کہا ہے کہ پی ایس ڈی پی کی شکل میں بلوچستان کی تقدیر کے فیصلے چند لوگ معلومات کی بنیاد پر کرتے رہے ہیں ہم کسی سے گلہ نہیں کرسکتے بلوچستان کی پسماندگی اور غربت کے ذمہ دار یہاں کے حکمران رہے ہیں ایسا کبھی بھی نہیں ہوا کہ سندھ ،پنجاب اور کے پی کے سے آکر کوئی وزیراعلیٰ بنا ہو جو لوگ آج پی ایس ڈی پی پر شور کررہے ہیں اور کہتے ہیں کہ ترقیاتی عمل جام ہے تو یہ وہ دو فیصد لوگ ہیں جن کی دکانداری بند ہوئی ہے انہوں نے کہا وسائل میں کمی نہیں ہم اپنے آپ کو خود ہی نظر انداز کرتے رہے ہیں
وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال خان کا مذکورہ بیان میں مذکورہ اہم انکشاف بلاشبہ بلوچستان کےلئے ایک بہت بڑالمحہ فکریہ ہے کہ اس کی پسماندگی کے اور غربت کے ذمہ دار یہاں کے حکمران رہے ہیں اس میں کوئی شک نہیں کہ بلوچستان میں اب تک جتنے بھی وزراءمنتخب ہوکر آئے ہیں ان کا تعلق بالکل بلوچستان سے ہی تھا
کسی دوسرے صوبے سے کوئی آکر یہاں وزیراعلیٰ نہیں بنا ہے وزیراعلیٰ بلوچستان نے مذکورہ اہم انکشافات اورصوبے کی پسماندگی و غربت کے ذمہ داروں کا ذکر کرکے یہ بات بھی ثابت کردی ہے کہ صوبے کی پسماندگی اور غربت میں وفاق کا کوئی ہاتھ نہیں اس کے ساتھ ساتھ پی ایس ڈی پی پر بھی شور کرنے والوں کی نشاندہی کی وہ صرف دو فیصد لوگ ہیں جن کا کوئی کردار نہیں ہے۔
وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال خان نے یہ بھی کہا ہے کہ وسائل میں کمی نہیں ہم اپنے آپ کو خود ہی نظر انداز کرتے رہے ہیں ۔
ہم سمجھتے ہیں کہ اگر واقعی سابق حکمرانوں نے مذکورہ اقدامات کئے ہیں تو یہ بلاشبہ صوبے کے مفاد میں نہیں تھے جس کی وجہ سے صوبے پسماندگی کا شکار رہا یہاں غربت کی شرح بھی زیادہ رہی جو یقینا صوبے کی بدقسمتی ہے ۔
اس لئے یہاں ضرورت اس امر کی ہے کہ وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال خان جو ایک سینئر پارلیمنٹرین ہیں جو قومی اسمبلی میں بھی صوبے کی نمائندگی کر چکے ہیں وہ صوبے کے مسائل پر ایک گہری نظر رکھتے ہیں اوراب وہ وزیراعلیٰ بلوچستان ہیں کو اس سلسلے میں احسن اقدامات کرکے صوبے کو ترقی کی راہ پر گامزن کرنے کےلئے احکامات جاری کرنے چاہئیں جوکہ صوبے کے مفاد کےلئے نہایت ہی ضروری ہے اس کے بغیر صوبہ کبھی ترقی کی منازل طے نہ کرسکے گا اس لئے ان کو صوبے کی پسماندگی کے خاتمے کےلئے اپنے تجربے کو بروئے کار لاکر احسن اقدامات کرنے چاہئیں جوکہ وقت کی اہم ضرورت ہے اگر وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال خان صوبے کوپسماندگی کی دلدل سے نکالنے اور غربت کے خاتمے میں کامیاب ہوجاتے ہیں تو ان کا تاریخی اقدام ہوگا۔
امید ہے کہ وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال خان یہ تاریخی اقدام کرنے میں کامیاب ہوجائینگے کیونکہ عوام کی ان سے کافی امیدیں وابستہ ہیں ۔

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*