بلوچستان کی ساحلی پٹی کو نیا انتظامی ڈویژن بنانےکا منصوبہ قومی مفاد کے منافی ہے ،لشکری رئیسانی

کوئٹہ( این این آئی) بلوچستان نیشنل پارٹی کے مرکزی رہنما نوابزادہ حاجی لشکری رئیسانی نے کہا ہے کہ بلوچستان کی ساحلی پٹی کو نیاانتظامی ڈویژن بنانے کا منصوبہ قومی مفاد کے منافی ہے۔ فیصلے مسلط کرنے کی روش ترک نہ کی گئی تو بلوچستانی عوام اور وفاق کے درمیان شکوک وشبہات میں اضافہ ہوگا ۔ بلوچستان نیشنل پارٹی اور عوام شرانگیز منصوبے کو اپنے قومی مفاد کے منافی سمجھتی ہے ۔صوبائی حکومت عوامی مفادات کے منافی فیصلوں کے آگئے مذاحمت کرے۔ سراوان ہاﺅس کوئٹہ میں کارکنوں کے وفد سے ملاقات میںنوابزادہ لشکری رئیسانی کا مزید کہنا تھا کہ بلوچستان کی ساحلی پٹی کو ایک نیا انتظامی ڈویژن بنانے کا منصوبہ بڑے خطرے کا پیش خیمہ ہے۔ بلوچستان نیشنل پارٹی اور صوبے کی عوام ایسے شرانگیز منصوبے کو اپنے قومی مفاد کے منافی سمجھتے ہیں جو ناقابل قبول ہے ۔ان کا کہنا تھاکہ عوامی خواہشات اور امنگوںکو نظر انداز کرکے کیا جانے والا فیصلہ نفرت کو فروغ دینے کی سازش ہے بلوچستان کے عوام سے ہونے والی زیادتی پر نئی صوبائی حکومت بھی بری الزمہ نہیں ہوسکتی ان کا کہنا تھا کہ اقتدار آنی جانی چیز ہے بلوچستان اسمبلی اراکین ساحلی پٹی کو لاحق خطرات ومضمرات پر اسمبلی میں بحث کرتے ہوئے عوامی مفادات کے منافی فیصلوں کی کھل کر مخالفت کرکے وفاق کے آگے مزاحمت کریں اجتماعی مفادات کو نقصانات سے دوچار کرنے والوں اوراُن کے ہمنواﺅں کو تاریخ کسی صورت معاف نہیں کریگی ۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ ماضی میں بھی فیصلے مسلط کرنے کی پالیسی سے ملکی یکجہتی کو نقصانات لاحق ہوئے ہیںیہ روش ترک نہ کی گئی تو اس سے بلوچستانی عوام اور وفاق کے درمیان موجود شکوک وشبہات میں اضافہ ہوگا جو ملکی مفاد میں نہیں حکمرانوں کو یہ نہیں بھولنا چائیے کہ ہمارا خطہ عالمی سامراجی قوتوں کے مفادات کی جنگ کا اکھاڑہ بنتا جارہا ہے ، ایسی صورتحال میں بلوچستان کی ساحلی پٹی کے حوالے سے منصوبہ بندی سے ان خدشات کو تقویت ملتی ہے کہ بلوچستان کی ساحلی پٹی کو جناح پور منصوبے کا حصہ بنانے کی سازش بروئے کار لائی جارہی ہے ۔ بلوچستان نیشنل پارٹی اور عوام سازشی تھیوریوں کے ذریعے استحصالی منصوبوں کے خلاف مذاحمت کرینگے۔ نوابزادہ حاجی لشکری رئیسانی نے امید ظاہر کی کہ حکمران قومی یکجہتی کے لیے نقصان کا باعث بننے والے اقدمات سے گریز کرینگے

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*