جنوبی وزیرستان میں پاک فوج کی کارروائی،6دہشتگرد ہلاک، 2جوان شہید

وانا/راولپنڈی(اے این این )جنوبی وزرستان میں پاک فوج کی کارروائی،6دہشتگرد ہلاک،2جوان شہید،بھاری مقدار میں اسلحہ برآمد۔پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ(آئی ایس پی آر)کے مطابق سکیورٹی فورسز نے جنوبی وزیر ستان کی تحصیل لدھا کے اسپینا میلہ نامی گاو¿ں میں دہشتگردوں کی موجودگی سے متعلق خفیہ اطلاع پر کارروائی کی، جس کے دوران سیکیورٹی فورسز اور دہشت گردوں کے درمیان شدید فائرنگ کا تبادلہ بھی ہوا۔اس کارروائی میں مقامی عمائدین کے قتل میں ملوث انتہائی مطلوب دہشت گرد بھی ہلاک ہوا ہے۔آئی ایس پی آر نے مزید بتایا ہے کہ فائرنگ کے تبادلے میں حوالدار رزاق خان اور حوالدار ممتاز حسین شہید ہوگئے۔شہداء کی متیتیں ان کے آبائی علاقوں کو روانہ کر دی گئی ہیں جہاں اعلیٰ فوجی اعزاز کے ساتھ سپرد خاک کیا جائے گا۔آئی ایس پی آر کا یہ بھی کہنا ہے کہ ہلاک دہشت گردوں سے ہتھیار اور مواصلاتی آلات بھی برآمد ہوئے ہیں،یہ دہشت گرد افغانستان میں اپنے ہینڈلرز سے رابطے میں تھے۔دہشتگرد آئی ڈی پیز کے بھیس میں چھپے ہوئے تھے ۔خیال رہے کہ ملک بھر میں پاک فوج نے دہشتگردوں کے خلاف آپریشن رد الفساد جاری کر رکھا ہے ۔آپریشن رد الفساد کے تحت سکیورٹی فورسز نے اب تک کئی کامیابیاں حاصل کیں اور کئی دہشتگردوں کو جہنم واصل کیا۔یاد رہے کہ 22 فروری 2017 کو پاک فوج نے پاکستان میں ایک نئے آپریشن ”آپریشن رد الفساد” کا اعلان کیا جو ملک بھر میں شروع کیا گیا۔ اس آپریشن کا مقصد بچے کچے دہشت گردوں کا بلا امتیاز خاتمہ کرنے، چھپے دہشت گردوں کو تلاش کرنے پر مشتمل ہے تاکہ، اب تک کی جانے والی کارروائیوں کے فوائد کو پختہ کیا جائے اور سرحدوں کی حفاظت کو یقینی بنایا جائے۔پاک فضائیہ، پاک بحریہ، دیوانی مسلح افواج اور دیگر سلامتی / قانون نافذ کرنے والے ادارے اپنی کارروائیاں جاری رکھیں گے / تاکہ ملک سے دہشت گردی کی لعنت کو ختم کیا جا سکے۔آپریشن رد الفساد کے بعد سے ہی ملک کے کئی علاقوں میں امن دیکھنے میں آیا جبکہ عوام نے بھی دہشتگردوں کے خلاف جاری اس آپریشن کو خوب سراہا اور ملک کی مسلح افواج کا شکریہ ادا کیا۔

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*