تازہ ترین

جس دن لگا فیصلے صحیح نہیں کر پا رہا، امپائرنگ چھوڑ دوں گا، علیم ڈار

کراچی (سپورٹس ڈیسک)پاکستانی امپائر علیم ڈار نے کہا ہے کہ میں نے اپنا کام صحیح اور ایمانداری کے ساتھ کیا ہے جس دن مجھے محسوس ہوا کہ میں اچھا نہیں کر پا رہا یا مجھ سے مزید نہیں ہو پا رہا، اس دن امپائرنگ کرنا چھوڑ دوں گا۔ایک انٹرویو میں علیم ڈار نے کہا کہ بعض وقت فیصلے غلط ہوسکتے ہیں، آپ کو شک کا فائدہ بھی ملتا ہے لیکن جس دن مجھے لگا کہ مجھ سے فیصلے غلط ہو رہے ہیں اور جو میں دیکھ رہا ہوں اس پر میں اعتماد نہیں کرسکتا تو اس دن امپائرنگ چھوڑ دوں گا۔انہوں نے کہا کہ کھلاڑیوں کی طرح امپائرز بھی ہوم گراﺅنڈ پر امپائرنگ کرنا چاہتے ہیں،میں بہت خوش ہوں کہ دو بہترین ٹیموں کے میچ میں اپنی خدمات سرانجام دوں گا،مجھے اپنا کام پسند ہے اور اسے کرنے میں مزہ آتا ہے۔علیم ڈار نے کہا کہ یہ بہت بڑا اعزاز ہے اور تھوڑا دباﺅ بھی ہے جو معمول کی بات ہے تاہم یہ 3 سے 4 اوور بعد ختم ہوجائےگا، میں نے 132 ٹیسٹ میچز میں امپائرنگ کی جن میں سے کوئی بھی پاکستان میں نہیں تھالہٰذا یہ میرے لئے بڑا موقع ہے۔علیم ڈار نے کہا کہ ٹی ٹوئنٹی تیز فارمیٹ ہے اور اس میں ایک الگ درجے کی توجہ درکار ہوتی ہے۔ ون ڈے کرکٹ میں بھی بیٹسمین بڑے شاٹس کھیلتے ہیں۔ جبکہ ٹیسٹ میچوں میں مختلف مزاج کی ضرورت ہوتی ہے، بطور امپائر آپ اسے پانچ یا چار دن کی کرکٹ نہیں سمجھتے، آپ اسے ہر سیشن کی طرح لیتے ہیں۔علیم ڈار نے بتایا کہ عام طور پر ہم باہر جا کر ٹریننگ کرتے ہوئے کھلاڑیوں کو دیکھتے ہیں،میں بیٹسمینوں کو نیٹ میں پریکٹس کرتے ہوئے ان کے اسٹائل اور تکنیک کو دیکھتا ہوں کیونکہ یہ سب چیزیں میدان میں کھیل کے دوران میری مدد کرتی ہیں۔واضح رہے کہ پاکستان اور جنوبی افریقا کے درمیان دونوں میچوں میں علیم ڈار اور احسن رضا پہلی مرتبہ اپنے ہوم گراﺅنڈ پر کسی ٹیسٹ میچ میں امپائرنگ کے فرائض انجام دیں گے۔ پاکستانی امپائر علیم ڈار نے کہا ہے کہ میں نے اپنا کام صحیح اور ایمانداری کے ساتھ کیا ہے جس دن مجھے محسوس ہوا کہ میں اچھا نہیں کر پا رہا یا مجھ سے مزید نہیں ہو پا رہا، اس دن امپائرنگ کرنا چھوڑ دوں گا۔ایک انٹرویو میں علیم ڈار نے کہا کہ بعض وقت فیصلے غلط ہوسکتے ہیں، آپ کو شک کا فائدہ بھی ملتا ہے لیکن جس دن مجھے لگا کہ مجھ سے فیصلے غلط ہو رہے ہیں اور جو میں دیکھ رہا ہوں اس پر میں اعتماد نہیں کرسکتا تو اس دن امپائرنگ چھوڑ دوں گا۔انہوں نے کہا کہ کھلاڑیوں کی طرح امپائرز بھی ہوم گراﺅنڈ پر امپائرنگ کرنا چاہتے ہیں،میں بہت خوش ہوں کہ دو بہترین ٹیموں کے میچ میں اپنی خدمات سرانجام دوں گا۔

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*