تازہ ترین

آزاد اور خود مختار صحافت پر یقین رکھتے ہیں، صادق سنجرانی

اسلام آباد (این این آئی)چیئرمین سینیٹ محمد صادق سنجرانی نے پارلیمانی رپورٹرز ایسوسی ایشن(PRA) ایگزیکٹوباڈی کے سکبدوش ہونے والے عہدیداران کے اعزاز میں پارلیمنٹ ہاو¿س میں ظہرانہ دیا۔ظہرانے میں سپیکر قومی اسمبلی اسد قیصر، ڈپٹی چیئرمین سینیٹ مرزا محمد آفریدی، قائد ایوان سینیٹ سینیٹر ڈاکٹر شہزاد وسیم، سینیٹر فیصل جاوید اور سیکرٹری سینیٹ محمدقاسم صمد خان کے علاوہ پی آر اے کی ایگزیکٹو باڈی کے عہدیداران اور دیگرصحافتی تنظیموں کے عہدیداران نے شرکت کی۔چیئرمین سینیٹ نے ظہرانے میں شریک ہونے والے پی آر اے عہدیداران اور دیگرمہمانوں کو خوش آمدید کرتے ہوئے اپنے خطاب میں کہا کہ پاکستان کی سا لمیت اور قومی سلامتی سب سے مقدم ہے اورپی آر اے پارلیمنٹ کا حصہ ہے جو ایک متحرک تنطیم بن چکی ہے اور ایوان کیلئے ایک اثاثے کی حیثیت رکھتا ہے۔صحافیوں کے مسائل کے حوالے سے چیئرمین سینیٹ نے کہا کہ صحافیوں کو درپیش مسائل سے واقف ہیں اوران مسائل کے حل کیلئے سنجیدہ اقدامات اٹھائے جا رہے ہیں۔انہوں نے کہا کہ صحافت حکومت کا ایک اہم ستون ہے اورصحافی حضرات حقیقت پر مبنی معیاری تنقید کے ذریعے حکومت اور اپوزیشن دونوں کی رہنمائی کر سکتے ہیں۔کسی بھی ترقی یافتہ ملک کی کامیابی میں صحافت کے کردار سے انکار نہیں کیا جا سکتا۔چیئرمین سینیٹ نے کہا کہ آزاد اور خود مختار صحافت پر یقین رکھتے ہیں اورملکی ترقی و جمہوریت کی بحالی کے لیے میڈیا کا کردار لائق تحسین ہے۔محمد صادق سنجرانی نے کہا کہ شعبہ صحافت سے منسلک افراد اپنی ذمہ داریوں کا احساس کرتے ہوئے خلوص اور ایمانداری سے اپنے فرائض منصبی ادا کررہے ہیں۔چیئرمین سینیٹ نے پی آر اے ایگزیکٹوباڈی کے سبکدوش ہونے والے عہدیداران کو ان کی شاندار خدمات پر خراج تحسین پیش کیا۔ انہوں نے کہا کہ پی آر اے رپورٹرزایوانوں سے حکمرانوں کی آوازیں عوام تک پہنچاتے ہیں اور ملکی مسائل احسن طریقے سے ا±جاگر کرتے ہیں البتہ اگر ایوانوں کی خبر پی آر اے کے رپورٹر ہی عوام تک پہنچائیں تو حقیقت پر مبنی معلومات عوام کو میسر ہو سکتیں ہیں۔اس حوالے سے بہتری کیلئے مل کر اقدامات اٹھانے کی ضرورت ہے۔ سپیکر قومی اسمبلی اسد قیصرنے ظہرانے دوران خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پارلیمانی رپورٹرز ایسوسی ایشن کی موجودہ ایگزیکٹو باڈی کو کامیابی کے ساتھ اپنی مدت پوری کرنے پر مبارکباد دیتا ہوں،جس طرح متحرک اندازمیں پی آر اے کی سابق باڈی نے پارلیمانی رپورٹرز کی فلاح و بہبود اور آزادی صحافت کے لئے اپنا کردار ادا کیا اس پر سابق صدر اور ان کی پوری ٹیم مبارکباد کی مستحق ہے،آج کے دور میں میڈیا تیزی سے ترقی کررہا ہے۔ سوشل میڈیا تیزی سے طاقت بن کر ابھر رہا ہے۔انہوں نے کہا کہ قومی اسمبلی سیکرٹریٹ پی آر اے کو PIPS سے معاونت فراہم کرنے کو تیار ہے جہاں باقاعدہ کورسز،سیمینارز،ورکشاپ کروائے جا سکتے ہیں۔مجھ سے سرپرست اعلیٰ پی آر اے حافظ طاہر خلیل نے متعدد بار درخواست کی کہ پی آر اے کے آفس کو منتقل کیا جائے اور ایک بڑا آفس دیا جائے کیونکہ پارلیمانی رپورٹرز کی تعداد بڑھ رہی ہے تو میں نے انہیں یقین دلاتا ہوں کہ اسمبلی سیکرٹریٹ اس حوالے سے ان کے ساتھ مکمل تعاون اور مدد کرے گا۔ظہرانے کے موقع پر سینئر صحافی و کالم نگار حافظ طاہر خلیل، صدر پی آر اے بہزاد سلیمی اور صدیق ساجد نے بھی خطاب کرتے ہوئے چیئرمین سینیٹ کا تعاون اور مسائل کے حل پر شکریہ ادا کیا۔

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*