تازہ ترین

آج ہم قائداعظم اور علامہ اقبال کو خراج عقیدت پیش کرتے ہیں،چودھری شجاعت

لاہور (آئی این پی)صدرپاکستان مسلم لیگ و سابق وزیر اعظم چودھری شجاعت حسین ، سپیکر پنجاب اسمبلی چودھری پرویز الٰہی اےم اےن اے مونس الٰہی نے یوم پاکستان کے موقع پر اپنے پیغام میں کہا ہے کہ آج ہم بانی پاکستان قائداعظم محمد علی جناح اور مصور پاکستان علامہ محمد اقبال کو خراج عقیدت پیش کرتے ہیں،جنہوں نے مسلمانوں کے لیے ایک الگ وطن حاصل کیا۔ آج کے دن ہم مقبوضہ کشمیر کے بہن بھائیوں سے اظہار یکجہتی کرتے ہیں جو غیر انسانی لاک ڈاون میں گزشتہ کئی سالوں سے زندگی بسر کررہے ہیں۔ ہم کشمیری بھائیوں کو یقین دلاتے ہےں کہ پاکستانی قوم شانہ بشانہ آپ کے ساتھ کھڑی ہے۔ یوم پاکستان مناتے ہوئے ہمیں اپنی صفوں میں اتحاد، نظم و ضبط اور جذبے کی ضرورت ہے تاکہ ہم ہر مشکل آفت کا مقابلہ کرسکیں ۔ 23 مارچ ہماری قومی تاریخ کا سنہرا دن ہے جب برصغیر پاک و ہند کے مسلمانوں نے ہندو اکثریت کے ظلم و جبر اور غلامی کی زنجیروں سے چھٹکارا حاصل کرنے کے لیے ایک آزاد اور خود مختار مسلم ریاست کے قیام کا فیصلہ کیا۔ آج کا دن ہمیں شاعر مشرق علامہ محمد اقبال کے افکار اور بابائے قوم قائد اعظم محمد علی جناح کے فرمودات کی طرف رجوع کرنے کی ترغیب دیتا ہے۔ یوم پاکستان بحیثیت قوم ہم نے پاکستان کے موجودہ چیلنج کو سمجھتے ہوئے ذمہ داری کا ثبوت دینا ہے۔ جس جذبے کے ساتھ 23مارچ 1940ءکو قرارداد پاکستان منظورہوئی۔ بحیثیت قوم ہم قائداعظمؒ اور ان کی زیر قیادت قرارداد پاکستان منظور کرنیوالے مسلم لیگ کے اکابرین کو شاندار الفاظ میں خراج عقیدت پیش کرتے ہیں۔ 23 مارچ 1940ءکا دن جذبوں کی تعمیراور خوابوں کی تعبیر کا دن تھا۔ 23 مارچ تاریخی اعتبار سے ہمارے لیے انتہائی اہمیت کا حامل دن ہے۔ ہمارے مسائل بہت زیادہ ہیں اور قومی یکجہتی کو دہشت گردی، انتہاپسندی، غربت اور کمزور معیشت کے ہاتھوں خطرات لاحق ہیں لیکن ان سب کے باوجود ہمار ا عزم اور حوصلہ غیر متزلزل ہے۔ انہوں کہا کہ پاکستان امن سے محبت کرنے والا ملک ہے اور ہم تمام مسائل کا پرامن حل چاہتے ہیں اور دنیا کو امن کا پیغام دینا چاہتے ہیں انہوں نے اس امید کا اظہار کیا کہ ہم اپنی صلاحیتوں کا استعمال کرتے ہوئے ان مسائل پر قابو پانے کیلئے مشترکہ جدوجہد کریں گے جو ہماری ترقی کی راہ میں رکاوٹیں ڈال رہے ہیں۔ آج کے دن ہم عہد کرتے ہیں کہ پاکستان کی ترقی کے لیے اپنا کردار بھر پور طریقے سے ادا کریں گے۔ تمام سیاسی جماعتوں کو اختلافات کو بھلا کر ایک مشترکہ لائحہ عمل اپنا ناہوگا۔ ملکی دفاعی اداروں اورپاکستان کی مسلح افواج اور قانون نافذ کرنے والے اداروں نے ملکی بقاءکی خاطر جو قربانیاں دی ہیں انہیں فراموش نہیں کیا جا سکتا۔ ملک پر جب بھی کوئی مشکل وقت آیا تو ہمارے دفاعی ادارے ملکی سیاسی قیادت کے ساتھ شانہ بشانہ کھڑے رہے ہیں۔ 23 مارچ کا دن ہمیں اس جدوجہد کی بھی یاد دلاتا ہے جس کے تحت آج ہم ایک آزاد فضا میں سانس لے رہے ہیں۔ قیام پاکستان کا مقصد ارض پاک کو ایک اسلامی جمہوری اور فلاحی ریاست بنانا تھا ۔ ملکی ترقی کی راہ میں رکاوٹوں کو راستے سے ہٹانے کے لیے ہمیں اپنی تمام تر صلاحیتوں کو استعمال کرتے ہوئے مسائل پر قابو پانا ہے ۔ پاکستانی قوم کسی بھی مشکل اور کسی بھی مصبےت کا مقابلہ کرنے کی صلاحیت رکھتی ہے۔ انشاءاللہ ہم ہر آزمائش پر کامیاب ہونگے ۔

جواب لکھیں

آپ کا ای میل شائع نہیں کیا جائے گا۔نشانذدہ خانہ ضروری ہے *

*